مقدمہ کالعدم تنظیم کےخلاف درج

مقدمہ کالعدم تنظیم کےخلاف درج

  

لاہو(کرائم سیل)واہگہ بارڈ پر ہونے والے خود کش حملے کا مقدمہ کالعدم تنظیم کےخلاف 302، 7اے ٹی اے، 324،ایکسپلوسو ایکٹ 3/4 اور109سمیت دیگر دفعات کے تحت تھانہ باٹا پور میں درج کرلیاگیا ہے،واہگہ بارڈر پرسکیورٹی فورسز نے سرچ آپریشن کرتے ہوئے خود کش جیکٹ برآمد کرلی۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ شب واہگہ بارڈر دھماکے کے بعد سکیورٹی فورسز اورپولیس نے علاقے میں سرچ آپریشن شروع کرد یا جس میں ایک خود کش جیکٹ برآمد کرکے ناکارہ بنا دی گئی ۔دوسری طرف دھماکے میں جاں بحق ہونیوالے بعض افراد کے لواحقین غم میں نڈھال اپنے پیاروں کی لاشیں لینے کے لیے اسپتالوں کے باہر رلنے پرمجبور ہو گئے ہیں۔اپنے پیاروں کی لاشیں نہ ملنے پر میواسپتال کے باہر لواحقین سراپا احتجاج بن گئے اورروتے ہوئے پولیس کےخلاف نعرے بازی کرتے رہے۔دھماکے میں باغبانپورہ کے علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک ہی خاندا ن کے 5افراد بھی جاں بحق ہوئے جس سے علاقہ میں سوگ کی فضا چھائی رہی ۔لاہور کے مختلف اسپتالوں میں زخمیوں کاعلاج جاری ہے ۔دھماکے کے زخمی میواسپتال ،سروسزاسپتال ،جنرل اسپتال اورگھرکی اسپتال میں زیرعلاج ہیں۔وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے جنرل اسپتال کا دورہ کای اور زخمیوں کی عیادت کی ۔وزیراعلیٰ نے اسپتال انتظامیہ کو ہدایت کی کہ زخمیوں کا مفت اوربہترعلاج کرنے کیا جائے ان کاکہناتھاکہ معصوم افراد کی زندگیوں سے کھیلنے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں ہیں۔وزیراعلیٰ نے سانحے کے تحقیقات کیلئے جوائنٹ انوسٹی گیشن ٹیم بنانے کی ہدایت کر دی ہے ۔خود کش حملے کامقدمہ کالعدم تنظیم کےخلاف 302، 7اے ٹی اے، 324،ایکسپلوسو ایکٹ 3/4 اور109سمیت دیگر دفعات کے تحت تھانہ باٹا پور میں درج کرلیاگیا ہے

مزید :

صفحہ اول -