ٹیسٹ میچز میں آسٹریلیا پاکستان کے سامنے معمولی ٹیم دکھائی دی: وسیم اکرم

ٹیسٹ میچز میں آسٹریلیا پاکستان کے سامنے معمولی ٹیم دکھائی دی: وسیم اکرم
ٹیسٹ میچز میں آسٹریلیا پاکستان کے سامنے معمولی ٹیم دکھائی دی: وسیم اکرم

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور لیجنڈ فاسٹ بولر وسیم اکرم نے آسٹریلیا سے 20 سال بعد ٹیسٹ سیریز جیتنے پر دلی خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ٹیسٹ سیریز میں آسٹریلوی ٹیم قومی ٹیم کے سامنے معمولی دکھائی دی ہے ۔

غیر ملکی خبررساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے 1984ءسے 2003ءکے درمیان104ٹیسٹ اور 356ایک روزہ میچز کھیلنے والے وسیم اکرم کا کہنا تھا کہ آسٹریلیا کو پاکستان کے ہاتھوں 32 سال بعد وائٹ واش اور 20 سال بعد سیریز میں ناکامی گرین شرٹس کے لئے قابل رشک ہے ، سعید اجمل کی غیر موجودگی میں باﺅلنگ لائن کمزور دکھائی دے رہی تھی لیکن ذوالفقار بابر اور نوجوان لیگ سپنر یاسر شاہ نے حیرت انگیز باﺅلنگ کا مظاہرہ کر کے ثابت کردیا کہ وہ بہترین باﺅلرز ہیں۔

 انہوں نے کہا کہ سیریز سے قبل ایسا محسوس ہوتا تھا کہ قومی ٹیم کی بیٹنگ لائن میں خامیاں موجود ہیں لیکن تمام بیٹسمینوں خصوصاً یونس خان اور مصباح الحق نے حیران کن پرفارمنس پیش کی اور دونوں ٹیسٹ میچز میں پاکستانی بیٹنگ اور باﺅلنگ لائن کے سامنے کینگروز ٹیم ایک عام سی ٹیم دکھائی دی۔

وسیم اکرم کا مزید کہنا تھا کہ انہوں نے یہ نہیں سوچا تھا کہ پاکستانی ٹیم دوسرے ٹیسٹ کی دونوں اننگز میں بھی مستقبل مزاجی برقرار رکھ پائے گی لیکن یونس خان نے اس کی بنیاد رکھی اور تمام کھلاڑی آسٹریلین باﺅلرز کے سامنے بہت اچھا کھیلے۔

مزید :

کھیل -