اس عورت کو 25 لوگوں نے گھسیٹ کر گھر سے نکالا اور مار مار کر زندہ لاش کی طرح چھوڑ دیا، اس کا قصور کیا تھا؟ جان کر کوئی بھی اس ’انصاف‘ پر پریشان ہوجائے

اس عورت کو 25 لوگوں نے گھسیٹ کر گھر سے نکالا اور مار مار کر زندہ لاش کی طرح چھوڑ ...
اس عورت کو 25 لوگوں نے گھسیٹ کر گھر سے نکالا اور مار مار کر زندہ لاش کی طرح چھوڑ دیا، اس کا قصور کیا تھا؟ جان کر کوئی بھی اس ’انصاف‘ پر پریشان ہوجائے

  

نئی دلی (نیوز ڈیسک) خواتین کے ساتھ دل دہلا دینے والے جرائم بھارت کی پہچان بن چکے ہیں۔ آئے روز کسی ایسے لرزہ خیز جرم کی داستان سامنے آتی ہے کہ انسان کانپ کر رہ جاتا ہے۔ بربریت کے اس ناتھمنے والے طوفان کی تازہ ترین مثال ریاست بہار کے شہر سماستی پور میں دیکھنے میں آئی جہاں 25 درندہ صفت مردوں نے ایک خاتون کے گھر میں گھس کر اسے بالوں سے پکڑا اور گھسیٹتے ہوئے باہر لے آئے اور پھر بازار میں لاکر سینکڑوں افراد کی موجودگی میں اس پر اتنا تشدد کیا کہ بیچاری ہوش و حواس ہی کھوبیٹھی۔

ہمسایہ ملک میں 8 درندوں کی شوہر کے سامنے اس کی بیگم سے ایسی شرمناک حرکت کہ شیطان بھی منہ چھپانے پر مجبور ہوجائے

اخبار دی میٹرو کی رپورٹ کے مطابق خاتون پر تشدد کرنے والے غنڈوں کا کہنا تھا کہ اس نے اپنے خاوند کو ہلاک کیا تھا۔ یہ الزام لگانے کے بعد انہوں نے خود ہی پولیس اور عدالت بن کر خاتون پر بھیانک تشدد کا فیصلہ صادر کردیا۔ خاتون کو اس کے بچوں کی موجودگی میں گھسیٹ کر اس کے گھر سے باہر نکالا گیا اور تقریباً دو درجن افراد اس پر ڈنڈوں، گھونسوں اور لاتوں سے تشدد کرتے رہے، جبکہ اس دوران اردگرد کھڑے سینکڑوں افراد تماشہ دیکھتے رہے۔

سماستی پور پولیس کا کہنا ہے کہ خاتون کی جان بچ گئی ہے تاہم اس کے جسم پر بے شمار چوٹیں آئی ہیں جن کا علاج جاری ہے۔ اس واقعے کی دل دہلادینے والی ویڈیو بھی منظر عام پر آچکی ہے جس میں تشدد کرنے والوں کو واضح طور پر دیکھا جاسکتا ہے، لیکن پولیس تاحال کسی ایک بھی ملزم کو گرفتار نہیں کر پائی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -