پی سی جی اے نے کپاس کی فیکٹریوں میں آمد کے اعداد و شمار جاری کردئیے

پی سی جی اے نے کپاس کی فیکٹریوں میں آمد کے اعداد و شمار جاری کردئیے

  

ملتان( سٹی رپورٹر )پاکستان کاٹن جنرز ایسوسی ایشن (پی سی جی اے)نے کپاس کی فیکٹریوں میں آمد کے اعدادو شمار جاری کر دیئے ہیں جسکے مطابق یکمنومبر2016تک ملک کی جننگ فیکٹریوں میں69لاکھ 48ہزار381گانٹھ کپاس آئی ۔ یکم نومبر2015تک 64 لاکھ(بقیہ نمبر38صفحہ7پر )

65ہزار600گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی تھی ۔ گذشتہ سال کی اسی مدت کے مقابلے میں4لاکھ 82ہزار781گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں زیادہ آئی ہے ۔ زیادتی کی شرح 7.47فیصد رہی ۔صوبہ پنجاب کی فیکٹریوں میں 39لاکھ 22ہزار050گانٹھ کپاس آئی ہے جو گذشتہ سال کی اسی مدت میں فیکٹریوں میں آنے والی 34 لاکھ45ہزار171گانٹھ کپاس سے 4لاکھ 76ہزار879گانٹھ زیادہہے ۔ پنجاب میں زیادتی کی شرح 13.8فیصد رہی ۔صوبہ سندھ کی فیکٹریوں میں 30لاکھ 26ہزار 331گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے جو گذشتہ سال کی اسی مدت میں فیکٹریوں میں آنے والی 30 لاکھ20ہزار429گانٹھ کپاس سے 5ہزار902گانٹھ زیادہ ہے ۔ سندھ میں زیادتی کی شرح 0.20فیصد رہی ۔ یکم نومبر 2016تک فیکٹریوں میں آنے والی کپاس سے 56 لاکھ 84ہزار892گانٹھ روئی تیار کی گئی ۔ ملک میں 1007جننگ فیکٹریاں آپریشنل ہیں ۔ ایکسپورٹرز نے رواں سیزن میں1لاکھ21ہزار629گانٹھ روئی خرید کی ہے جبکہ ٹیکسٹائل سیکٹرنے 49لاکھ 96ہزار603گانٹھ روئی خرید کی ہے ۔ ٹریڈنگ کارپوریشن آف پاکستان(TCP)نے کاٹن سیزن 2016-17میں خریداری نہیں کی ہے ۔ صوبہ پنجاب میں735جننگ فیکٹریاں آپریشنل ہیں اور32لاکھ 4ہزار182گانٹھ روئی تیار کی گئی ہے ۔ ضلع ملتان میں یکم نومبر2016تک 1لاکھ77 ہزار703گانٹھ کپاس، ضلع لودھراں میں1لاکھ 1ہزار520گانٹھ کپاس، ضلع خانیوال میں 4لاکھ 15ہزار 829گانٹھ کپاس ، ضلع مظفر گڑھ میں 2لاکھ14 ہزار953،ضلع ڈیرہ غازی خان میں1لاکھ95 ہزار151 گانٹھ کپاس،ضلع راجن پور میں 2لاکھ37 ہزار 941گانٹھ کپاس، ضلع لیہ میں 1لاکھ68ہزار 147 گانٹھ کپاس،ضلع وہاڑی میں2 لاکھ 58ہزار405گانٹھ کپاس ، ضلع ساہیوال میں 1 لاکھ 59ہزار188گانٹھ کپاس ، ضلع میانوالی میں 1 لاکھ 49 ہزار730 گانٹھ کپاس، ضلع رحیم یار خان میں5لاکھ4ہز ار962گانٹھ ،ضلع بہاولپور میں 5لاکھ12ہزار360گانٹھ کپاس، ضلع بہاولنگر میں 5 لاکھ35ہزار550گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے ۔ ضلع سانکھڑ میں11لاکھ 39ہزار616گانٹھ کپاس ،ضلع میر پور خاص میں 2لاکھ 47 ہزار908 گانٹھ کپاس ،ضلع نواب شاہ میں 2 لاکھ87 ہزار075 گانٹھ کپاس ،ضلع سکھر میں 3 لاکھ36ہزار 373 گانٹھ کپاس اور ضلع حیدرآباد میں 2 لاکھ9 ہزار141 گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے۔ غیر فروخت شدہ سٹاک18لاکھ 30ہزار149گانٹھ کپاس اور روئی موجود ہے ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -