ارکان پارلیمنٹ کے اثاثوں کی سالانہ جانچ پڑتال لازمی قرار

ارکان پارلیمنٹ کے اثاثوں کی سالانہ جانچ پڑتال لازمی قرار

  

اسلام آباد(اے این این )انتخابی اصلاحات کی ذیلی کمیٹی نے ارکان پارلیمنٹ کے اثاثوں کی سالانہ جانچ پڑتال لازمی قراردیدی۔ انتخابی اصلاحات کی ذیلی کمیٹی کا اجلاس وزیرقانون زاہد حامد کے زیر صدارت ہوا۔اجلاس کے بعد میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے زاہد حامد نے بتایا کہ کمیٹی نے ارکان پارلیمنٹ کے اثاثوں کی سالانہ جانچ پڑتال لازم قرار ددی ہے۔ انہوں نے کہا ارکان پارلیمنٹ کو ہر سال اثاثوں میں اضافے یا کمی کی تفصیلات بتانا ہوں گی۔ الیکشن کمیشن کو اثاثوں کے بجائے ٹیکس گوشوارے جمع کرانے پر اعتراض ہے جبکہ ٹیکس گوشواروں کی جانچ پڑتال کرنا زیادہ آسان ہے۔ الیکشن کمیشن اور ایف بی آر متفقہ فیصلہ کر کے کمیٹی کو آگاہ کریں۔انہوں نے کہا کہ انتخابی اصلاحات کے مسودے پر الیکشن کمیشن کے اعتراضات کو حل کرلیا گیا ہے۔ انتخابی قوانین کو یکجا کر کے نئے مسودے کی رپورٹ تیار کرلی گئی ہے۔ رپورٹ کی ذیلی کمیٹی سے منظوری لے کر جلد پارلیمانی کمیٹی کو پیش کر دی جائے گی۔

لازمی قرار

مزید :

پشاورصفحہ اول -