’جو بھی ملازم یہ بات نہ مانے اُس کی تنخواہ کاٹ لو‘ سعودی حکومت نے سخت ترین حکم جاری کردیا

’جو بھی ملازم یہ بات نہ مانے اُس کی تنخواہ کاٹ لو‘ سعودی حکومت نے سخت ترین ...
’جو بھی ملازم یہ بات نہ مانے اُس کی تنخواہ کاٹ لو‘ سعودی حکومت نے سخت ترین حکم جاری کردیا

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں ملازمین کی کل وقتی حاضری کو یقینی بنانے کے لئے دن میں پانچ مرتبہ فنگر پرنٹ حاضری کا نظام رائج کیا گیا، لیکن اس کے باوجود کچھ ملازمین غیر ذمہ داری کے مرتکب پائے گئے، جس کے بعد حکام نے فیصلہ کیا ہے کہ اب پانچ بار فنگر پرنٹ حاضری میں ناکام رہنے والے ملازمین کی تنخواہیں کاٹی جائیں گی۔

سعودی گزٹ نے اخبار الوطن کے حوالے سے بتایا ہے کہ مدینہ کے میئر محمد العامری کا اس حوالے سے کہنا تھا ”دن میں پانچ بار فنگر پرنٹ حاضری کا نظام ملازمین کی باقاعدگی اور پیداواری صلاحیت کو بڑھانے کے لئے نافذ کیا گیا تھا۔ اب اگر ملازمین فنگر پرنٹ رجسٹریشن میں نصف سے ایک گھنٹے کی تاخیر کریں گے تو اس کے نتائج بھگتنا ہوں گے کیونکہ اگر ایک ماہ میں مجموعی تاخیر 10 گھنٹوں سے زیادہ نکلی تو تنخواہ کاٹی جائے گی۔ اب بھی کچھ ایسے ملازمین ہیں جو دن میں پانچ بار فنگر پرنٹ رجسٹریشن سے خوش نہیں ہیں اور صرف آتے اور جاتے وقت حاضری لگانے کو ترجیح دے رہے ہیں۔“

سعودی عرب نے انتہائی تشویشناک کام کرنے کی تیاری کرلی، جانے والوں کو ویزا فیس کے علاوہ اب اس چیز کے بھی پیسے دینا پڑیں گےان کا مزید کہنا تھا کہ پہلی فنگر پرنٹنگ دفتر آنے کے وقت ہوگی، دوسری 9 سے 9:30 بجے کے درمیان، تیسری 10:30 سے 11بجے کے درمیان، چوتھی 11:45 سے 12:15 کے درمیان اور آخری چھٹی کے وقت ہوگی۔ حکام کا یہ بھی کہنا ہے کہ نئے نظام کے نفاذ کے بعد حاضری کی شرح 55.5فیصد تک بڑھ گئی ہے۔

مزید :

عرب دنیا -