ناجائز اثاثے‘ ریٹائرڈ نائب تحصیلدار امتیاز وڑائچ کیخلاف تحقیقات کا دائرہ وسیع 

  ناجائز اثاثے‘ ریٹائرڈ نائب تحصیلدار امتیاز وڑائچ کیخلاف تحقیقات کا دائرہ ...

  



 ملتان (خبر نگار خصوصی)نیب ملتان نے ناجائز اثاثے بنانیکے لزام میں ریٹائرڈ نائب تحصیلدار ملتان سٹی امتیاز احمد وڑائچ کے خلاف جاری تحقیقات کو وسیع کردیا ہے۔اور ساتھ ہی ملتان سمیت صوبہ بھر کے ڈپٹی کمشنر سے انکی اور اہل خانہ کی جائیدادوں کے بارے تفصیلات بھی طلب کرلیں ہیں۔  ذرائع(بقیہ نمبر9صفحہ12پر)

 کا کہنا ہے کہ امتیاز احمد وڑائچ نے اپنی سروس ایک جو نئیر کلرک کے عہدے سے شروع کی مختلف عہدوں پر فائز رہنے کے بعد انھیں نائب تحصیلدار کے عہدے پر ترقی دی گئی امتیاز احمد وڑائچ نے اپنی سروس کا بیشتر حصہ ملتان سٹی بطور نائب تحصیلدار کے عہدے پر فائز رہ کر گزارا ہے۔ اس دوران ان کے خلاف اینٹی کریپشن کو متعدد  درخواستیں موصول ہوتی رہیں جو کہ ملی بھگت سے دبا دیں گئیں۔ مذکورہ نائب تحصیلدار نے اپنی سروس کے دوران اختیارات کے ناجائز استعمال سے متعدد شہریوں کو انکے جائز حقوق سے محروم بھی کیا اب نیب ملتان کو ان کے خلاف درخواست موصول ہوئی تو نیب حکام نے اس کی چھان بین کا کام شروع کر دیا ہے۔جبکہ دوسری جانب ایڈیشنل ڈائریکٹر سٹاف نیب نے ملتان سمیت صوبہ بھر کے ڈپٹی کمشنرز سے امتیاز احمد وڑائچ ان کی بیوی اور بیٹوں رشید امتیاز،عمیر امتیاز،بلال امتیاز انکے بھائیوں نیاز احمد اور فاروق احمد کے نام موجود اراضی کی تفصیل طلب کر لی ہے معلوم ہوا ہے ڈپٹی کمشنر آفس کا سٹاف اپنے پرانے ساتھی اہلکار کو بچانے کے لیے پوری طرح متحرک ہے ان اہلکاروں کی جانب سے ابھی تک امتیاز وڑائچ کے پراپرٹی کی رپورٹ مرتب نہیں کی گئی۔ 

وسیع 

مزید : ملتان صفحہ آخر