کے ایم ڈی سی کے اساتذہ اور ڈاکٹروں کی تنخواہیں فوری ادا کی جائیں: حافظ نعیم الرحمن 

کے ایم ڈی سی کے اساتذہ اور ڈاکٹروں کی تنخواہیں فوری ادا کی جائیں: حافظ نعیم ...

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے عباسی شہید ہسپتال کے ڈاکٹروں اور کے ایم ڈی سی کے پروفیسرز، ایسوسی ایٹ پروفیسر اور اساتذہ کی تنخواہوں کی عدم ادائیگی اور دیگرمسائل پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے میئر کراچی اور بلدیہ عظمیٰ کی جانب سے کئی مہینوں سے انہیں درپیش مسائل حل نہ کرنے اور تنخواہوں کی ادائیگی کے لیے بروقت اقدامات نہ کرنے کی شدید مذمت کی ہے اور مطالبہ کیا ہے کہ عباسی شہید ہسپتال کے ڈاکٹروں اور کے ایم ڈی سی کے اساتذہ کے مسائل حل کرتے ہوئے ان کی تنخواہوں کی فوری ادائیگی کو یقینی بنایا جائے۔صوبائی حکومت شہر کے دو بڑے طبی اداروں کی بد حالی اور ڈاکٹروں و اساتذہ کے مسائل سے چشم پوشی کرنے اور بدترین صورتحال کی ذمہ داری کے ایم سی پر ڈالنے کے بجائے اپنی ذمہ داری بھی پوری کرے اور اس صورتحال کا نوٹس لیتے ہوئے مسائل کو حل کرائے۔حافظ نعیم الرحمن نے چند روز قبل متاثرہ سینیئر ڈاکٹروں اور اساتذہ کی جانب سے میئر کراچی سے ملاقات کی کوششوں کے باوجود میئر کے ملاقات نہ کرنے اور کے ایم سی عملے کی جانب سے ان کے ساتھ بدتمیزی اور بدسلوکی پر بھی گہرے افسوس کا اظہار کیا اور کہاکہ کے ایم سی انتظامیہ کی جانب سے یقین دہانی پرڈاکٹروں اور اساتذہ کے احتجاج ختم کرنے کے باوجود مسائل جوں کے توں ہیں اور تاحال تنخواہیں ادا نہیں کی گئیں ہیں۔انہوں نے کہا کہ بلدیہ عظمیٰ کی نااہلی اور غفلت کے باعث صورتحال دن بدن سنگین ہوتی جارہی ہے۔5ماہ سے تنخواہیں نہ ملنے پر ڈاکٹرز اور اساتذہ سخت بے چینی اور اضطراب میں مبتلا ہیں جس کی وجہ سے تعلیمی سرگرمیاں اور اوپی ڈی بھی شدید متاثر ہورہی ہے اور طلبہ و طالبات اور مریضوں کو بھی شدید مشکلات اور پریشانیاں ہورہی ہیں۔مریضوں کے بہتر علاج کے لئے ڈاکٹروں کا ذہنی، جسمانی، مالی طور پر مطمئن ہونا ضروری ہے۔حافظ نعیم الرحمن نے کہاکہ جماعت اسلامی ڈاکٹروں اور سینئر اساتذۃ کرام کے ساتھ ہے اور ان کے مسائل کے حل کے لیے ہر فورم پر آواز اٹھائے گی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر