اپوزیشن میرے منہ سے این آر او کے 3لفظ سننا چاہتی ہے مگر یہ غداری ہو گی: عمران خان 

  اپوزیشن میرے منہ سے این آر او کے 3لفظ سننا چاہتی ہے مگر یہ غداری ہو گی: ...

  



اسلام آبا (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیر اعظم عمران خان نے ایک بار پھر کہا ہے ملک میں کرپشن کرنیوالے افراد کو این آر او کسی صورت نہیں دیا جائے گا۔ کرپشن میں ملوث افراد کیخلاف برہمی کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے فیس بک بیان میں لکھا کہ جب تک ان کا احتساب نہیں ہوتا اس وقت تک ملک ترقی کی راہ پر گامزن نہیں ہو سکتا۔ وزیر اعظم نے کسی کا نام لیے بغیر  لکھا کہ وہ صرف مجھ سے تین الفاظ ’این آر او‘ سننا چاہتے ہیں، جو میں بول نہیں سکتا کیوں کہ یہ ملک کے ساتھ غداری کے مترادف ہوگا۔واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان متعدد بار کہہ چکے ہیں کہ جنہوں نے ملک کو اربوں ڈالرز کا مقروض کیا اور لوگوں پر مشکلات ڈالیں ان سے جواب لوں گا اور جب تک زندہ ہوں کسی صورت این آر او نہیں دوں گا۔  دریں ا ثناوزیراعظم عمران خان نے کہاہے کہ کرتارپور سکھ یاتریوں کو خوش آمدید کہنے اور ان کے استقبال کیلئے تیار ہے، راہداری کا افتتاح بابا گرونانک کے 550 ویں جنم دن کے موقع پر 9 نومبر کو کیاجائے گا۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک بیان میں وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ وہ اپنی حکومت کو کرتارپور راہداری کی ریکارڈ مدت میں تیاری پر مبارک باد پیش کرتے ہیں۔انہوں نے اپنے ٹوئٹر پر کرتارپور منصوبے کی تصاویر شیئر کراتے ہوئے کہا ہے کہ کرتارپور سکھ یاتریوں کے استقبال کے لیے پوری طرح تیار ہے۔واضح رہے کہ دو روز قبل وزیراعظم نے کرتارپور زیارت کیلئے آنے والے سکھ یاتریوں کے لیے پاسپورٹ اور 10 روز قبل اندراج کرانے کی شرط ختم کردی تھی۔کرتارپور سکھوں کے لیے ایک مقدس مقام کی حیثیت رکھتا ہے کیونکہ یہ وہ مقام ہے جہاں سکھ مت کے بانی گرونانک نے اپنی زندگی کے آخری ایام گزارے تھے اور اسی گرودوارے میں ان کی قبر بھی موجود ہے۔وزیر اعظم عمران خان نے  سکھ زائرین کے لیے مہیا کی جانے والی سہولیات اور انتظامات پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ اتوار کو وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت کرتارپور راہداری کے افتتاح کے حوالے سے اجلاس ہوا اجلاس میں وزیر برائے مذہبی امور پیر نور الحق قادری، وزیر داخلہ بریگیڈئیر (ر) اعجاز احمد شاہ، سیکرٹری خارجہ، سیکرٹری داخلہ، اسپیشل سیکرٹری خزانہ، سیکرٹری دفاع، سیکرٹری مذہبی امور و دیگر سینئر افسران شریک ہوئے۔اجلاس میں کرتار پور کواریڈور کے افتتاح، بھارت اور دنیا بھر سے آنے والے سکھ زائرین کی سہولت کاری کے لیے کیے جانے والے انتظامات کا جائزہ لیا گیا۔وزیر اعظم نے سکھ زائرین کے لیے مہیا کی جانے والی سہولیات اور انتظامات پر اطمینان کا اظہار کیا۔

عمران خان

مزید : صفحہ اول