بکروں ،چھتروں کی قیمتیں آسمان پر ۔اجتماعی قربانی کے رجحان نے زور پکڑ لیا

بکروں ،چھتروں کی قیمتیں آسمان پر ۔اجتماعی قربانی کے رجحان نے زور پکڑ لیا ...

  

                                                    لاہور (اسد اقبال ) ملک میں جاری مہنگائی کے پیش نظر امسال عید قربان کے پر اجتماعی قربانی کے رجحان نے زور پکڑ لیا ہے شہریو ںکی بڑی تعداد نے گا ئے ،بیل ،ویہڑے اور بچھڑو ں کی خریداری پر ذہن مر کوز کر لیے ہیںکیو نکہ بکروں ،دمبو ں اور چھتروں کی قیمتیں رواں سیزن میں اس قدر پروان چڑھ گئی ہیں کہ لوگ سنت ابراہیمی کی ادائیگی کے لیے بڑے جانور خریدنے پر مجبور ہیںبکر منڈیو ں میں اس وقت ساہیوال کی گائے اور ویہڑہ قیمت کے لحاظ سے سب سے مہنگا ہے تاہم خریداری رجحان میںکمی کا عنصر بد ستور جاری ہے زرائع کا کہنا ہے کہ شام کے وقت بکر منڈیو ں میں جانوروں کی قیمتو ں میں غالب کمی کا امکان ہوتا ہے جس کے پیش نظر شہریو ں کی بڑی تعداد خریداری کی غرض سے آتی ہے اور بیو پاری بھی عید قربان میں ایک روز باقی رہ جانے کے باعث جانوروں کی قیمتو ں میں کمی کر دیتے ہیں روزنا مہ پاکستان کی جانب سے گزشتہ روز کیے گئے سروے کے دوران مشاہدہ ہوا کہ ضلعی حکو مت کی جانب سے نامزد کردہ بکر منڈیو ں کی بجائے بیو پاری بازاروں اور گلی محلو ں میں قر بانی کے جانور فر وخت کررہے ہیں۔ قر بانی کے جانو روں کی خر ید و فر و خت کے لیے لاہور میں قائم کی جانے والی سب سے بڑی شا ہ پو ر کانجرا ں منڈی و دیگر منڈیو ں میں خر یداروں نے جانو روں کی آ سماں سے باتیں کر تی قیمتو ں پر تشو یش کا اظہار کیااور کہا کہ یہاں پر جانوروں کی قیمتیں اس قدر بلند ہیں کہ جن کو خر یدنا محال ہے عام دنبہ 20سے 30 ہزار ، بکرا 25سے 80 ہزار اور گائے ، بیل کی قیمتیں ڈیڑھ لاکھ سے اڑھائی لاکھ اور اونٹ کی قیمت 5لاکھ روپے تک پہنچ گئی ہیں جن کی خریداری اب عام آدمی کے بس میں نہیں رہی گز شتہ روز جانوروں کی قیمتوں اور مہنگائی کے حوالے سے کئے گئے سروے کے مطابق صو بائی دار الحکو مت کی بکرا منڈیوں میں عید الضحیٰ کے مو قع پر بیو پاریو ں نے قیمتیں آسمان کو پہنچا دی ہیں عام دنبوں کی قیمتیں 20 ہزار سے 30 ہزار روپے تک پہنچ گئیں بکروں کی قیمتیں بھی ایک ہی جست میں 20 ہزار سے 60 ہزار تک جا پہنچی جبکہ بڑے جانور گائے ، بیل وغیرہ کی قیمتوں نے تو حد کردی کہ ڈیڑھ لاکھ سے اڑھائی لاکھ روپے تک گائے ، بیل وغیرہ کی فروخت کے لئے اصرار کیا جارہا ہے ۔ عوامی حلقوں کے نمائندوں کا کہنا ہے کہ مہنگائی کے باعث رواں سال اجتماعی قربان پر اکتفا کر یں گے پاکستان سے گفتگو کرتے ہو ئے بکرا منڈیوں میں بیوپاریوں حاجی اسماعیل اور قیوم نیازی نے کہا کہ گزشتہ ماہ سیلا ب کے باعث بیوپاریو ں کا 30فیصد مال پانی کی نظر ہو گیا ہے جس سے بیوپاریوں کا مالی نقصان ہوا ہے اور بکر منڈیو ں میں سپلائی کی کمی کے پیش نظر جانوروں کی قیمتیں بڑھی ہیں ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -