بھارت مقبوضہ کشمیر میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنا چاہتا ہے:سید صلاح الدین

بھارت مقبوضہ کشمیر میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنا چاہتا ہے:سید صلاح الدین

  



سرینگر (اے پی پی) متحدہ جہاد کونسل کے چیئرمین اور حزب المجاہدین کے سپریم کمانڈر سید صلاح الدین نے کہا ہے کہ بھارت غیر کشمیریوں کو سٹیٹ سبجیکٹ سرٹیفکیٹ جاری کر کے مقبوضہ کشمیر میں آبادی کے تناسب کو تبدیل کرنا چاہتا ہے ۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سرینگر میںذرائع ابلاغ نے سید صلاح الدین کے حوالے سے کہا ہے کہ بھارت غیر مقامی مزدوروںکو آباد کرکے مقبوضہ علاقے میں آبادی کا تناسب تبدیل کر رہا ہے ، انہوںنے کہاکہ ضلع بارہمولہ میں متعدد غیر مقامی افراد کو سٹیٹ سبجیکٹ سرٹیفکیٹ جاری کئے گئے ہیں ۔ انہوںنے ہر سال مقبوضہ کشمیر آنے والے ہندو یاتریوں کی تعداد کم کرنے پر زوردیتے ہوئے کہاکہ یاتریوں کی تعداد میں اضافہ ، ان کے قیام کیلئے مستقل بنیادی ڈھانچے کا قیام اور سرکاری اور نجی شعبے میں غیر مقامی مزدوروں کی بڑھتی ہوئی مداخلت سے جموںوکشمیر میں مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں تبدیل کرنے کی بھارت کی سازش ظاہر ہوتی ہے ۔ انہوںنے کہاکہ بھارت کی طرف سے مردم شماری کے اعدادو شمار میں تبدیلی بھی اسی سازش کا حصہ ہے ۔ حزب المجاہدین کے سپریم کمانڈر نے کہاکہ بھارت کی طرف سے ریل کی پٹڑی بچھانے اور سڑکوں اور سرنگوں کی تعمیر کا واحد مقصد جموںو کشمیر پر اپنے قبضے کو طول دینا ہے ۔ سید صلاح الدین نے بزرگ کشمیری حریت رہنماءسید علی گیلانی کی طرف سے بھارت کی ثقافتی یلغا رکے خلاف منگل کو ہڑتال کی کال کی بھی حمایت کی ۔ ادھر حریت رہنماءاور جموںو کشمیر ڈیموکریٹک پولیٹیکل موومنٹ کے سربراہ فردوس احمد شاہ ، جموںو کشمیر پیپلز فریڈم لیگ کے جنرل سیکریٹری محمد رفیق گنائی اور ٹریڈ یونین موومنٹ کے سربراہ محمد شفیع لون نے بھی سید علی گیلانی کی طرف سے ہڑتال کی کال کی حمایت کی ہے

مزید : عالمی منظر


loading...