تھانہ نولکھا، ملزمان کی عدم گرفتاری سے جرائم کی شرح بڑھ گئی

تھانہ نولکھا، ملزمان کی عدم گرفتاری سے جرائم کی شرح بڑھ گئی

  



لاہور (خبر نگار) تھانہ نولکھا پولیس نے گزشتہ 8 ماہ کے دوران 528 سے زائد درج مقدمات میں 350 سے زائد ملزمان کو گرفتار نہیں کیا جن کو پولیس نے اشتہاری قرار دے رکھا ہے اور ان اشتہاری ملزمان میں سے پولیس اکا دکا اشتہاری ملزم کو گرفتار تو کرلیتی ہے لیکن ان ملزمان کی ایک بڑی تعداد کی گرفتاری نہ ہونے کے باعث اس تھانے کی حدود میں جرائم کی شرح میں اضافہ ہوکر رہ گیا جبکہ اس تھانے کی حدود میں قتل وغارت کے واقعات میں ملوث ہونے ہے ٹاپ ٹین قرار دیئے جانے والے انتہائی خطرناک اشتہاری ملزمان نے علاقے میں اندھیر نگری مچا رکھی ہے۔ اس میں پولیس نے ایک 4 اشتہاری ٹاپ ٹین کو گرفتار تو کررکھا ہے لیکن اس کے باوجود وارداتوں اور جرائم کی شرح میں کمی نہیں آئی اس حوالے سے ایس ایچ او جاوید گجر اور ایڈیشنل ایس ایچ او محمد افضل سمیت ڈیوٹی افسر احمد نواز نے موقف اختیار کیا ہے کہ تھانے کی حدود میں پہلے سے جرائم کی شرح کمی ہوئی ہے۔ ایس ایچ او نے بتایا کہ تعیناتی کے بعد بڑے بڑے جرائم پیشہ کو علاقہ بدر کردیا ہے جبکہ ڈاکوﺅں اور راہزنوں کے 4 گروہوں کو گرفتار جبکہ 4 ماہ کی تعیناتی کے دوران 50 سے زائد اشتہاری ملزمان کو گرفتار کیا ہے۔

مزید : ایڈیشن 1


loading...