عمران اور قادری بیرونی ایجنڈے کی تکمیل کیلئے ملکی سالمیت سے کھیل رہے ہیں ،احسان اللہ

عمران اور قادری بیرونی ایجنڈے کی تکمیل کیلئے ملکی سالمیت سے کھیل رہے ہیں ...

  

چارسدہ (بیورورپورٹ)مسلم لیگ (ن) خیبر پختون خواہ کے سینئر نائب صدر الحاج احسان اللہ خان نے کہا ہے کہ طاہر القادری اور عمران خان بیرونی ایجنڈے کی تکمیل کیلئے ملک کی سا لمیت سے کھیل رہے ہیں ۔ عمران خان اور قادری نے پاکستان کو پوری دنیا میں تماشہ بنا یا ہو اہے ۔ جمہوریت اور جمہوری اداروں کی باتیں کرنے والے عمران خان وزیر اعظم بننے کیلئے گھناؤنے سازشوں میں مصروف ہیں ۔ عمران خان ، قادری اور طالبان میں کوئی فرق نہیں۔وہ چارسدہ پریس چیمبر میں پروگرام \"گیسٹ آور \"میں اظہار خیال کر رہے تھے ۔ سابق صوبائی وزیر اور مسلم لیگ (ن) کے صوبائی نائب صدر الحاج احسان اللہ خان نے کہاکہ گزشتہ دور حکومت میں پنجاب کے وزیر اعلی شہباز شریف نے پورے پنجاب میں حق حاکمیت ادا کرتے ہوئے پنجاب کا نقشہ تبدیل کر کے عوام کے بنیادی مسائل حل کئے اور ترقیاتی منصوبوں کا جال بچھا کر عوام کے دل جیت لئے۔ پنجاب میں مسلم لیگ (ن) کی حکومت کی شاندار کارکر دگی کی بنیاد پر 11مئی 2013کے انتخابات میں عوام نے میاں محمد نواز شریف پر اعتماد کا اظہار کرکے واضح مینڈیٹ دیا ۔ خیبر پختون خواہ میں مسلم لیگ (ن)بڑی آسانی سے محلوط حکومت بنانے کی پوزیشن میں تھی مگر میاں نواز شریف نے انتہائی تدبر کا مظاہرہ کرکے تحریک انصاف کی مینڈیٹ کو تسلیم کیا اور عمران خان کو خیبر پختون خواہ میں حکومت بنانے کی دعوت دی ۔ میاں نواز شریف نے عمران خان کو پورا موقع دیا کہ وہ میاں شہباز شریف کے نقش قدم پر چل کر عوام کے دل جیت کر تمام پاکستانیوں کو اپنی طرف مائل کریں مگر عمران خان نے خیبر پختون خواہ کے عوام کے مسائل پر توجہ دینے کی بجائے وزارت عظمیٰ کی کر سی غیر آئینی اور غیر جمہوری طریقے سے حاصل کرنے کو اپنا مشن بنایا جس کی وجہ سے خیبر پختون خواہ کے عوام ان سے متنفر ہوئے ۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان اور طاہر القادری یہودی لابی کے ایجنڈے پر کار فرما ہیں۔

اور ملک کی جڑیں کھوکھلے کررہے ہیں۔ عمران خان نے آزادی مارچ کے نام پر اسلام آباد میں عریانی اور فحاشی کا سرکس کھول رکھا ہے جبکہ طاہر القادری مذہب کے آڑ میں انقلاب کے نعرے لگا کر معصوم خواتین کے مذہبی جذبات کو اپنے گھناؤنے مقاصد کیلئے استعمال کر کے ریاستی اداروں، وزیر اعظم ہاوس اور سپریم کورٹ پر حملے کررہے ہیں جبکہ دوسری طرف شاہ محمو د قریشی اسمبلی فلور پر ریاستی اداروں پر حملوں سے انکارکر کے مگر مچھ کے انسو بہا رہے ہیں ۔ تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان نے بدھ کے روز ارکان اسمبلی سمیت قومی اسمبلی سے مستعٰفی ہونے کا اعلان کیا مگر اسمبلی آکر استعفٰی کی بجائے مذاکرات کو فوقیت دی ۔گزشتہ 20دن سے عمران خان اور طاہر القادری نے عالمی دنیا میں پاکستان کو تماشہ بنارکھا ہے۔طالبان پاکستان کے آئین ، قانون ، پارلیمنٹ اور عدلیہ کو نہیں مانتے جبکہ قادری اور عمران بھی قانون ، آئین ، پارلیمنٹ اور عدلیہ کے باغی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان نواز شریف کے کامیاب پالیسیوں سے خوف ذدہ ہو گئے اور اپنے سیاسی مستقبل کو تاریک دیکھ کر غیر جمہوری اور غیر آئینی راستہ اختیار کرکے منتخب وزیر اعظم اور پارلیمنٹ کے خلاف سازشیں کرنے لگے۔ انہوں نے کہاکہ طاہر القادری اور عمران خان کے غیر آئینی مطالبات مان لئے جائے تو کل کوئی بھی قوت تحریک انصاف اور پاکستان عوامی تحریک سے کہیں زیادہ لوگوں کوا کٹھا کرکے جمہوریت اور جمہوری اداروں پر شب خون مارے گی ۔ انہوں نے کہاکہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کی ایف آئی آر اور انتخابی دھاندلی کے حوالے سے سپریم کورٹ کے چیف جسٹس کی سربراہی میں کمیشن کے قیام کے بعد تحریک انصاف اور عوامی تحریک کے دھرنوں کا کوئی جواز نہیں ۔

مزید :

علاقائی -