الطاف حسین کا پارلیمنٹ سے ایم کیو ایم کے استعفوں کا مشروط اعلان ،ایک ہفتے کی ڈیڈ لائن

الطاف حسین کا پارلیمنٹ سے ایم کیو ایم کے استعفوں کا مشروط اعلان ،ایک ہفتے کی ...

  

                           لندن/کراچی(اے این این) ملک میں جاری سیاسی بحران میں الطاف حسین بھی کود پڑے،پارلیمنٹ سے ایم کیو ایم کے ارکان کے استعفوں کا مشروط اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس دکھلاوا اور ڈرامہ ہے،ایک ہفتے میں رویہ درست نہ کیا گیا تو استعفے دے دیں گے،اسمبلی لوگوں کے مسائل حل نہیں کر سکتی،ملک میں آئین و قانون نہیں۔لندن سے جاری اپنے بیان میں انھوں نے کہا کہ ارکان پارلیمنٹ کو طرز عمل درست کرنے کے لئے ایک ہفتے کا وقت دیتا ہوں اگر طرز عمل درست نہ ہوا تو استعفے دے دینگے ، ملک میں قانون و آئین موجود نہیں ، اسمبلی لوگوں کے مسائل حل نہیں کرسکتی ۔ انہوں نے کہاکہ پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس ڈرامہ اور دکھاوا ہے جمہوریت کا راگ الاپنے والے کمیشن کھانا چاہتے ہیں ، مشترکہ اجلاس بلانے والے خود کو جمہوری ثابت کرنا چاہتے ہیں ۔ لطاف حسین نے ایم کیو ایم کے ارکان پارلیمنٹ کو ہدایت کی کہ وہ اپنے استعفے ڈپٹی کنوینر کے پاس جمع کرادیں۔اس بیان سے چند گھنٹے قبل الطاف حسین نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آزادی آئی نہ انقلاب ،ایک ہزار ارب روپے کا نقصان ہو گیا۔اب یہ مذاق ختم ہو جا نا چاہیے ۔ جتنی زیادہ دیر ہو گی اتنا ہی نقصان ہو گا۔

مزید :

صفحہ اول -