تحریک انصاف کے کارکنوں کو ہراساں کرنے کےخلاف درخواست پر جواب طلب

تحریک انصاف کے کارکنوں کو ہراساں کرنے کےخلاف درخواست پر جواب طلب

  

 لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کے دو کارکنوں کو پولیس کی طرف سے ہراساں کرنے کے خلاف درخواست پر ہوم سیکرٹری، ڈی سی او ، سی سی پی او لاہور اور دیگر مدعاعلیہان سے جواب طلب کرتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ درخواست گزاروں کے خلاف کارروائی کے حوالے سے قانون پرسختی سے کاربندرہا جائے۔لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے حلقہ این اے 125سے تحریک انصاف کی پبلک افیئر کمیٹی کے چیئرمین محمد عتیق اور ڈیفنس کی رہائشی کاشف علی شاہ کی درخواست پر سماعت کی،درخواست گزاروں کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ ایس ایچ او جنوبی چھاﺅنی اور آر اے بازار نے 31اگست کو ان کے گھر میں داخل ہو کر اہل خانہ کو ہراساں کیا اورتوڑ پھوڑ کی ، درخواست گزاروں نے بتایا کہ تحریک انصاف کی حمایت کرنے پر پولیس کی طرف سے انہیں ہراساں کیا جا رہا ہے اور انہیں جعلی مقدمات میں پھنسائے جانے کی دھمکیاں دی جا رہی ہے، انہوں نے استدعا کہ پولیس کو انہیں ہراساں کرنے سے روکا جائے اور انہیں جھوٹے مقدمات میں پھنسائے جانے کے اقدام سے بھی روکا جائے، ابتدائی سماعت کے بعد عدالت نے م سیکرٹری، ڈی سی او ، سی سی پی او لاہور اور دیگر فریقین کونوٹس جاری کرتے ہوئے 8ستمبر تک جواب طلب کر لیا۔

جواب طلب

مزید :

صفحہ آخر -