”ایک ہی شخص کو دونوں ذمہ داریاں دینا صحیح نہیں“ ہرشا بھوگلے نے مصباح الحق کی تعیناتی پر تحفظات کا اظہار کر دیا مگر کیوں؟

”ایک ہی شخص کو دونوں ذمہ داریاں دینا صحیح نہیں“ ہرشا بھوگلے نے مصباح الحق کی ...
”ایک ہی شخص کو دونوں ذمہ داریاں دینا صحیح نہیں“ ہرشا بھوگلے نے مصباح الحق کی تعیناتی پر تحفظات کا اظہار کر دیا مگر کیوں؟

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) مشہور بھارتی کمنٹیٹر ہرشا بھوگلے نے پاکستانی ٹیم کے سابق کپتان مصباح الحق کو بطور کوچ اور چیف سلیکٹرذمہ داری سونپنے پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک ہی شخص کو دونوں ذمہ داریاں دینا صحیح نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے مصباح الحق کو تین سال کیلئے قومی ٹیم کا ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مقرر کیا ہے جبکہ وقار یونس کو اتنے ہی عرصے کیلئے باﺅلنگ کوچ تعینات کیا گیا ہے۔ ہرشا بھوگلے نے اس حوالے سے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ناپسندیدگی اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایک ہی شخص کو دونوں ذمہ داریاں دینا صحیح نہیں ہے۔

58 سالہ ہرشا بھوگلے کا ماننا ہے کہ کھلاڑی ٹیم سے باہر ہوجانے کے ڈر کے باعث کوچ سے اپنے مسائل ڈسکس نہیں کرسکیں گے جو کہ کھلاڑیوں کی راہ میں ایک رکاوٹ ہے۔انہوں نے لکھا کہ کبھی بھی کسی ایک شخص کے کوچ اور سلیکٹر ہونے کا مداح نہیں رہا۔ کھلاڑی کوچ کے پاس اپنے مسائل لے کر آتے ہیں۔ مگر جب انہیں پتا ہوگا کہ اس شکایت کے نتیجے میں وہ ٹیم سے باہر کر دئیے جائیں گے تو پھر ہوسکتا ہے کہ وہ اپنے کوچ کے ساتھ ایماندار نہ ہوں۔

واضح رہے کہ مصباح الحق اور وقار یونس کی قومی کرکٹ ٹیم کے ہمراہ پہلی اسائنمنٹ سری لنکا کے خلاف سیریز ہوگی، آئی لینڈرز کے خلاف 3 ایک روزہ اور 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کی سیریز 27 ستمبر سے شروع ہوگی۔

مزید :

کھیل -