قانون نافذ کرنے والے اداروں کاکوئٹہ میں آپریشن،خاتون خود کش حملہ آور سمیت6 دہشتگرد ہلاک

قانون نافذ کرنے والے اداروں کاکوئٹہ میں آپریشن،خاتون خود کش حملہ آور سمیت6 ...
قانون نافذ کرنے والے اداروں کاکوئٹہ میں آپریشن،خاتون خود کش حملہ آور سمیت6 دہشتگرد ہلاک

  


کوئٹہ(صباح نیوز)صوبائی دارالحکومت کوئٹہ کے علاقے مشرقی بائی پاس پر قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اہلکاروں کی آپریشن کے نتیجے میں خاتون خود کش حملہ آور سمیت6 مبینہ دہشتگرد ہلاک جب کہ کارروائی میں ایک اہلکار جاں بحق اور 5زخمی ہوگئے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق کوئٹہ میں مشرقی بائی پاس کے علاقے میں آپریشن کے دوران خاتون سمیت 2مبینہ خودکش حملہ آوروں سمیت 6مبینہ دہشتگرد ہلاک ہوگئے۔ آپریشن کے دوران ایک اہلکار سیف اللہ جاں بحق جبکہ 5اہلکار سلیمان خان ،معصوم خان ،الطاف ،ابوبکر اور نصیب اللہ زخمی ہوگئے ہیں، لاش اور زخمیوں کو فوری طورپر ہسپتال منتقل کردیاگیاہے ،آپریشن کے بعد کمپاؤنڈ کو کلیئر کردیاگیاہے ،سی ٹی ڈی ترجمان کے مطابق کارروائی کے دوران ایک خودکش حملہ آور نے خود کو دھماکا خیز مواد اڑادیا، مارے جانے والوں میں خاتون خود کش حملہ آور بھی شامل ہے۔ دہشتگردوں کے ٹھکانے سے اسلحہ و گولہ بارود بھی برآمد کرلیا گیا۔سی ٹی ڈی ترجمان کا کہنا ہے کہ سی ٹی ڈی اور حساس اداروں کا آپریشن 5 گھنٹے تک جاری رہا، آپریشن کے دوران سی ٹی ڈی کا ایک اہلکار شہید اور تین زخمی ہوگئے۔ڈی آئی جی عبدالرزاق چیمہ نے بتایا کہ آپریشن 5 گھنٹے جاری رہا جس میں بلوچستان کانسٹیبلری کا ایک ڈرائیور شہید اور پانچ اہلکار زخمی زخمی بھی ہوئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ مشرقی بائی پاس کے علاقے میں انٹیلی جنس کی بنیاد پر آپریشن کیا گیا، سی ٹی ڈی نے حساس ادارے کے اہلکاروں کے ساتھ مل کر آپریشن کیا۔دریں اثناء وزیر اعلی بلو چستان جام کمال خان نے سیکورٹی فورسز کی کامیاب کارروائی پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کارروائی میں حصہ لینے والی ٹیم کو مبارکباد دی ہے ۔انہوں نے کہا کہ سیکیورٹی فورسز نے جرات اور بہادری سے دہشت گردوں کے ٹھکانے کو تباہ کیا اور دہشت گردوں کو ان کے انجام تک پہنچایا گیا،وزیراعلی نے کہا کہ عوام کے تحفظ اور امن کے لیے فورسز کی کارکردگی باعث اطمینان ہے۔

مزید : علاقائی /بلوچستان /کوئٹہ


loading...