کراچی میں کورونا، بارش اور لاشوں پر سیاست جاری، نیب رہا تو ملک نہیں چل سکتا: شاہد خاقان عباسی 

کراچی میں کورونا، بارش اور لاشوں پر سیاست جاری، نیب رہا تو ملک نہیں چل سکتا: ...

  

 کراچی(این این آئی)مسلم لیگ(ن) کے سینئرنائب صدرشاہد خاقان عباسی نے کہاہے کہ کراچی کا مستقل حل یہ ہے کہ خصوصی فنڈز دیئے جائیں، شیخ عمران الحق نے پی ایس او میں 3سال لگائے جو منافع بخش رہے، آج جو پی ایس او کے ایم ڈی ہیں انہوں نے ملک کو ساڑھے 6ارب کا نقصان دیا ہے، عدالت نے پوچھا تقرری کا اختیار کس کا ہے تو کہا گیا وزیراعظم کا، حقیقت یہ ہے اگر نیب رہا تو ملک نہیں چل سکتا، کسی ادارے میں کوئی ماہر شخص نہیں، کسی ادارے میں کوئی کوالیفائڈ شخص کام کرنے کو تیار نہیں، وزیراعظم جو باتیں کرتے ہیں ان کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں ہوتا۔جمعرات کو سندھ ہائی کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ کراچی میں کورونا، بارش اور لاشوں پر سیاست کی جا رہی ہے۔ عمران خان کو اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کے آنے کے بعد ہوش آیا ہے کہ کراچی آؤں۔  نیب نے ریفرنس ڈیڑھ سال کے بعد دائر کیا ہے، مجھ پر الزام تھا کہ میں نے ایم ڈی پی ایس او کی تعیناتی غیر قانونی کی۔ لمبی بحث کے بعد عدالت نے ہماری ضمانت منظور کی، عدالت نے جو سوال کیا اس کا ایک جواب بھی نیب کے پاس موجود نہیں تھا۔انہوں نے کہا کہ ہم پر سیاسی مقدمات بنائے جا رہے ہیں، آج چیئرمین نیب کو اپنے ادارے کی کرپشن نظر نہیں آ رہی، چینی کی مد میں اڑھائی سو ارب روپے لوٹے گئے وہ نیب کو نظر نہیں آ رہے۔ آج کسی ادارے میں کوئی قابل اور اہل لوگ نہیں۔ آج ہر پوسٹ خالی پڑی ہوئی ہے، کوئی آنے والا نہیں، ہزاروں ارب کا نقصان کر دیا گیا، وزیر اعظم کو اداروں کا پتہ نہیں ہوتا اور باتیں کرنے لگ جاتے ہیں۔

شاہد خاقان عباسی

مزید :

صفحہ آخر -