مہنگی بجلی کی بڑی وجہ کیا ہے ؟2 سال حکومت کرنے کے بعد بھی وفاقی وزیر برائے توانائی عمر ایوب خان کا ایسا دعویٰ کہ یقین کرنا مشکل

مہنگی بجلی کی بڑی وجہ کیا ہے ؟2 سال حکومت کرنے کے بعد بھی وفاقی وزیر برائے ...
مہنگی بجلی کی بڑی وجہ کیا ہے ؟2 سال حکومت کرنے کے بعد بھی وفاقی وزیر برائے توانائی عمر ایوب خان کا ایسا دعویٰ کہ یقین کرنا مشکل

  

 لاہور (آئی این پی ) وفاقی وزیر برائے توانائی عمر ایوب نے کہا ہے کہ ملک میں مہنگی بجلی کی بڑی وجہ ماضی کے مہنگے ترین بجلی معاہدے ہیں، حکومت ان معاہدوں پر نظر ثانی کے ساتھ نئے سولر اور ہائیڈل منصوبے بھی لگا رہی ہے، تین چار سال میں انرجی مارکیٹ بھی کھول دیں گے۔ وزیر توانائی عمر ایوب خان نے کالا شاہ کاکو میں یونیورسٹی آف انجینئرنگ کے زیر اہتمام پہلی اے سی ٹیسٹنگ لیب اور سولر ہال کی افتتاح کیا۔

اس موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عمر ایوب خان نے کہا کہ سابق حکومتوں کے مہنگے بجلی معاہدوں سے بہت نقصان ہوا، ماضی کے مہنگے معاہدوں کی وجہ سے ہی ملک میں بجلی مہنگی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت ان معاہدوں پر نظر ثانی کے ساتھ نئے سولر اور ہائیڈل منصوبے بھی لگا رہی ہے، تین چار سال میں انرجی مارکیٹ بھی کھول دیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں (ڈسکوز) کی اوور ہالنگ بھی کرنے جا رہے ہیں تاکہ عوام کی مشکلات کم ہو سکیں۔

عمر ایوب کا کہنا تھا کہ کے الیکٹرک نے جو اپنے سسٹم میں انویسٹ کرنا تھا وہ نہیں کیا، اب اسے موقع دے رہے ہیں کہ اپنا سسٹم بہتر بنائے اور اگلے سال تک اپنا ایل این جی پلانٹ لگائے۔ اس سے قبل گورنر ہاس میں 10 یونیورسٹیوں کو سولر انرجی پر منتقل کرنے کے لیے ایم او یو کی تقریب ہوئی، کمپنیوں سے شفاف معاہدوں کے نتیجے میں سولر انرجی کا یونٹ 24 روپے سے کم ہو کر صرف 6 روپے کا ہو گیا ہے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -