سفارت کار چلے جائیں، 10اپریل کے بعد حفاظت کے ذمہ دار نہیں:شمالی کوریا

سفارت کار چلے جائیں، 10اپریل کے بعد حفاظت کے ذمہ دار نہیں:شمالی کوریا
سفارت کار چلے جائیں، 10اپریل کے بعد حفاظت کے ذمہ دار نہیں:شمالی کوریا

  

پیانگ یانگ(مانیٹرنگ ڈیسک) شمالی کوریا نے کہا ہے کہ 10 اپریل کے بعد برطانیہ، روس اور دیگر یورپی ممالک کے سفارت خانوں کی حفاظت کی ذمہ داری اس پر عائد نہیں ہوگی۔برطانوی محکمہ خارجہ کی ترجمان کے مطابق شمالی کوریا نے برطانیہ سے کہا ہے کہ وہ 10 اپریل سے قبل اپنا سفارتی عملہ واپس بلالے بصورت دیگر وہ ان کی حفاظت کا ذمہ دار نہیں ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ جنیوا کنونشن کے تحت سفارت کاروں کی حفاظت کرنا شمالی کوریا کی ذمہ داری ہے اور برطانیہ اس سلسلے میں پیانگ یانگ سے رابطے میں ہے۔ روس کے وزیرخارجہ سرگئی لاروف نے کہا کہ جزیرہ نما کوریا کی موجودہ صورت حال کے تناظر میں روس شمالی کوریا اور چین سے رابطے میں ہے۔واضح رہے کہ شمالی کوریا اور امریکہ کے درمیان کشیدگی کے باعث پیانگ یانگ نے امریکہ پر میزائل حملے کے ساتھ ساتھ اپنی افواج کو ایٹمی حملہ کرنے کی بھی اجازت دیدی ہے۔ دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی پر عالمی برادری نے اپنی تشویش کا اظہار کیا ہے اور اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل بان کی مون نے شمالی کوریا کو خبردار کیا کہ وہ دھمکی آمیز بیان دینے سے گریز کرے، دھمکی آمیز بیانات کے خطرناک نتائج برآمد ہوسکتے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی