مزارات پر حملوں کے خلاف،اہلسنت کی 11تنظیموں نے یوم سوگ منایا

مزارات پر حملوں کے خلاف،اہلسنت کی 11تنظیموں نے یوم سوگ منایا

لاہور (پ ر) شام میں حضرت اویس کرنی ؓ ، حضرت عمار بن یاسرؓ، حضرت خالد بن ولیدؓ، حضرت سیدہ زینبؓ کے مزارات پر دہشت گردی کے واقعات کے خلاف اہلسنت کی 11تنظیموں کے زیر اہتمام ملک بھر میں یوم احتجاج منایا گیا جمعہ کے اجتماعات میں علماءنے عظمت صحابہ و عظمت اہلبیت کے موضوع پر خطابات کئے اور مذمتی قرارداتیں منظور کی گئیں مساجد میں جمعہ کے اجتماعات میں الجہاد، الجہاد، لبیک، لبیک، لبیک، الجہاد ، الجہاد کے نعرے لگائے گئے صوبائی دارالحکومت میں نماز جمعہ کے بعد داتا دربار چوک میں احتجاجی مظاہرہ کیا گیا مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈ اور بینر اٹھا رکھے تھے احتجاجی مظاہرے سے عالمی جماعت اہلسنت کے مرکزی امیر مفتی پیر سید مصطفی اشرف رضوی، حقوق اہلسنت محاذ کے مرکزی امیر پیر سید شاہد حسین گردیزی، تحریک تحفظ ناموس رسالت کے پروفیسر احمد حسین ایڈووکیٹ، خواجہ معین الدین چشتی ٹرسٹ کے حاجی حمید فاضل چشتی، مرکزی میلاد کمیٹی پاکستان کے چیئرمین سید مختار اشرف رضوی، دفاع اسلام محاذ کے علامہ دلنواز نورانی، بزم برکاتیہ کے علامہ آصف برکاتی، گردیزی ویلفیئر سوسائٹی کے پیر محمد حسین، انٹرنیشنل بزم قادریہ جیلانیہ کے میاں قیصر اقبال، مشائخ اہلسنت پاکستان کے پیر خادم حسین شرقپوری ، مفتی غلام حسن، مولانا دلنواز رضوی، علامہ محبت علی قادری اور دیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے مزارات کی بے حرمتی کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ مزارات پر دہشت گردی کے واقعات شرمناک او ر قابل مذمت ہیں شام میں مزارات کی بے حرمتی عالم اسلام کے مسلمانوں کی عقیدت کو چیلنج ہے صحابہ کرام کے مقدس مزارات کے تحفظ کے لئے عالم اسلام کے حکمرانوں کو مشترکہ ٹھوس حکمت عملی تیار کرنی چاہیے

مزید : میٹروپولیٹن 1