سرپر بٹھانے کو مرد نہ ملا تو شادی۔ ۔۔

سرپر بٹھانے کو مرد نہ ملا تو شادی۔ ۔۔
سرپر بٹھانے کو مرد نہ ملا تو شادی۔ ۔۔

  

نیویارک (مانیٹرنگ ڈیسک) ایک 32 سالہ امریکن خاتون ایم اے وولف اپنے اوپر بٹھانیوالے گراﺅنڈرائیڈ  سے ایسی متاثرہوئیں کہ فیئرگراﺅنڈ رائیڈ سے شادی ہی کر ڈالی، یہ رائیڈ پنسکوانیا کے ایمیوزمنٹ پارک میں نصب ہے۔ وولف کا دعویٰ ہے کہ پہلی مرتبہ اُس نے 13سال کی عمر میں رائیڈر کی سواری کی تھی اور پہلی ہی نظر میں جسمانی اور ذہنی طورپرمتاثرہوگئی تھی۔ وولف کاکہناتھاکہ اسے رائڈ سے بے پناہ محبت ہے،جیسے کہ خواتین اپنے شوہر سے کرتی ہیں ، وہ جانتی ہیں کہ دونوں کا رشتہ لمبے عرصہ تک برقراررہے گا۔برطانوی اخبار کے مطابق خاتون 160میل سے زیادہ سفر کرکے سال میں 10مرتبہ اپنے پسندیدہ رائیڈر سواری کرنے آئیں اور 10سال کی رفاقت کے بعد اُس نے فیصلہ کیاکہ رائیڈ سے اپنی محبت کو عملی جامہ پہنائے۔ خاتون کاکہناتھاکہ اُس نے کسی سے بھی اپنی محبت کے بارے میں بات نہیں کی کیونکہ اُسے معلوم ہے کہ فیئرگراﺅنڈ رائیڈسے محبت معمول نہیں ۔ امریکی خاتون نے دعویٰ کیاکہ دونوں ایک دوسرے کو روحانی اور جسمانی طورپر مطمئن کررہے ہیں اور دوسروں کے بیٹھنے پر حسد بھی نہیں کرتے ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس