عوام اور کمیونسٹ پارٹی کے درمیان خلا پیدا کرنے کی امریکی کوششیں ناکام ہونگی:چین

  عوام اور کمیونسٹ پارٹی کے درمیان خلا پیدا کرنے کی امریکی کوششیں ناکام ...

  

بیجنگ (مانیٹرنگ ڈیسک،شِنہوا)چین کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے کہا ہے کہ کچھ امریکی شخصیات اور امریکی محکمہ خارجہ کی چینی عوام اور کمیونسٹ پارٹی آف چائینہ(سی پی سی) کے درمیان خلا پیدا کرنے کی کوششیں ناکام ہوں گی۔ وزارت خارجہ کی ترجمان ہوا چھون اینگ نے ان خیالات کا اظہار سی پی سی اور چینی میڈیا اداروں کے بارے میں امریکی محکمہ خارجہ کے بیورو آف بین الاقوامی انفارمیشن پروگرامز کی ویب سائٹ پر شائع ایک آرٹیکل کے جواب میں پریس بریفنگ میں کیا۔ہوا نے کہا اس آرٹیکل میں امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے 60 چینی صحافیوں کے ساتھ کیے گیے امتیازی سلوک اور ملک بدری کے اقدام کاچینی عوام اورسی پی سی کے درمیان خلا پیدا کرنے کی کوشش کرتے ہوئے دفاع کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ 41 سال قبل چین کے ساتھ سفارتی تعلقات قائم کرتے وقت امریکہ بخوبی آگاہ تھا کہ چین سی پی سی کی زیر قیادت ایک سوشلسٹ ملک ہے اور صرف اس وجہ سے چینی صحافیوں پر پابندی عائد کرنا کہ ان کا تعلق سی پی سی کی زیر قیادت ایک سوشلسٹ ملک سے ہے بلاجواز ہے۔ہوا نے کہا کہ میڈیا کے درمیان فرق اس بات میں مضمر ہے کہ آیا وہ حقائق کو مستند، غیر جانبدارانہ اور معروضی انداز میں رپورٹ کرتاہے نہ کہ ان کے سیاسی رجحانات یا نظریے کے اور یہی وجہ ہے کہ چین نے کبھی امریکی میڈیا سے مختلف سلوک نہیں کیا چاہے وہ ریپبلکن پارٹی کا حامی ہو یا ڈیموکریٹک پارٹی کا۔ہوا نے کہا کہ امریکہ کو چینی میڈیا کو نظریاتی تعصب کے باعث نہیں دبانا چاہئے اور یہ کہ امریکہ کو نوول کورونا وائرس کی وباکے پھیلا کے باعث اپنے ملکی معاملات پر توجہ دینی چاہئے۔

مزید :

عالمی منظر -