پچھلے سال بھی یوکرائن کے کسانوں کو فائدہ پہنچایا گیا، چوہدری پرویز الٰہی نے بھی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا ڈالا

پچھلے سال بھی یوکرائن کے کسانوں کو فائدہ پہنچایا گیا، چوہدری پرویز الٰہی نے ...
پچھلے سال بھی یوکرائن کے کسانوں کو فائدہ پہنچایا گیا، چوہدری پرویز الٰہی نے بھی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا ڈالا

  

 لاہور(آئی این پی ) سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہی نے حکومت پنجاب کے کسانوں کے بارے میں اقدامات پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ کسانوں سے برا سلوک کب ختم ہو گا، حکومت کسانوں سے گندم نہیں خرید رہی تو پھر ضلع وار پابندی کس بات کی۔

سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہی سے مسلم لیگ کسان ونگ کے وفد اور دوسری کسان تنظیموں کے نمائندوں نے لاہور میں ملاقات کی، کسانوں نے مسائل سے سپیکر کو آگاہ کیا۔ کسانوں سے گفتگو میں ان کاکہنا تھا کہ پچھلے سال بھی یوکرائن کے کسانوں کو فائدہ پہنچایا گیا، ہمارے کسان رل گئے تھے، پنجاب کے کسانوں کا پتہ نہیں کیا حال ہوتا ہے یہ تو وقت ہی بتائے گا، کب ختم ہو گا۔ کسانوں کو باردانہ نہیں دیا جا رہا تو پھر ضلع وار بار دانے پر پابندی کا کیا مقصد ہے، حکومت کسانوں سے گندم کی خریداری نہیں کر رہی تو پھر پابندی کس بات کی۔

ان کاکہناتھاکہ بہاولپور، ملتان، جنوبی پنجاب سمیت تمام اضلاع میں کاشت کار پر یشان ہیں۔ سندھ حکومت اپنے کسانوں سے گندم دو ہزار روپے میں خرید رہی ہے اورپنجاب کا کسان پریشان ہے۔

مزید :

کسان پاکستان -علاقائی -پنجاب -لاہور -