پیپلزپارٹی مزدوروں کی نمائندہ جماعت ہے،سعید غنی

پیپلزپارٹی مزدوروں کی نمائندہ جماعت ہے،سعید غنی

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر) وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر برائے محنت وافرادی قوت سینیٹر سعید غنی نے کہا ہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی مزدوروں کی سب سے بڑی نمائندہ جماعت ہے اور ہم اس طبقے کے مفادات کا تحفظ کریں گے ۔ وہ مقامی ہوٹل کے آڈیٹوریم میں صوبہ سندھ کے مزدور رہنماؤں اور سول سوسائٹی کے نمائندگان کے اعزاز میں اپنی جانب سے دیئے گئے استقبالیہ تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ تقریب سے سینئر مزدور رہنما حبیب الدین جنیدی، کرامت علی، خواجہ محمد اعوان، عبدالعزیز میمن، کنیز فاطمہ، ناصر منصور، لطیف مغل، منظور رضی، شوکت علی، عبدالعزیز عباسی خالد خان، لیاقت مگسی، روشن کلہوڑو، حاجی محمد یعقوب،عبدالرشید سولنگی سیکریٹری لیبرز سندھ، ڈائریکٹر لیبر سندھ مصطفی سہاگ، رحمت اللہ سرکی، اسلم سموں، منظور ملاح، سید منور رضا، نظام الدین شاہ، غلام محبوب، قمر الحسن، میر ذوالفقار، فرحت پروین اور دیگر نے خطاب کیا۔ مشیر محنت سعید غنی نے کہا کہ محنت کش طبقہ نے اس ملک میں جمہوریت کے استحکام اور آمرانہ قوتوں کے خلاف جدوجہد میں پیپلز پارٹی کے شانہ بشانہ حصہ لیا ہے اور ہم اس طبقے کے جمہوری کردار کو سلام پیش کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بطور مشیر محنت میری یہ بھی ذمہ داری ہے کہ میں اس ادارے کو بھرپور طریقے سے فعال بناؤں تاکہ یہ ادارہ محنت کشوں کے مسائل کے حل کیلئے صوبے میں صنعتوں کے فروغ اور ترقی میں بھرپور کردار ادا کرے تاکہ زیادہ سے زیادہ افراد کو روزگار مل سکے اور صوبے میں خوشحالی آئے۔ انہوں نے کہا کہ ہم گڑھے مردے اکھاڑنے میں یقین نہیں رکھتے بلکہ آگے بڑھنا چاہتے ہیں اور یہ پیغام اپنی وزارت اور اس کے ذیلی اداروں کے تمام افسران اور عملے کو دینا چاہتا ہوں کہ وہ پوری مستعدی سے اپنے فرائض ادا کریں۔محنت کش عوام کی خدمت کریں اور میں بھی بتادینا چاہتا ہوں کہ بد نظمی اور کرپشن کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جائیگا۔ سعید غنی نے محنت کش نمائندگان کے اس بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ صوبے سندھ نے پہلے ہی صنعتی مزدور قوانین میں بہتری لانے کے لئے مختلف ایکٹ پاس کئے ہیں اور مزید مثبت قوانین پاس کرینگے۔ انہوں نے کہا کہ ہم جلد از جلد سہ فریقی لیبر کانفرنس بھی منعقد کرنا چاہتے ہیں تاکہ آجر، اجیر اور حکومت کے نمائندگان ایک چھت کے نیچے باہم مشاورت کے ذریعے صوبے میں صنعتی ترقی اور محنت کشوں کے حالات کار میں بہتری لانے کے لئے مشترکہ اقدامات تجویز کرسکیں۔ مشیر محنت نے کہا کہ ہم کسی بھی طبقے کے مفادات کے خلاف نہیں لیکن ہم یہ بھی بتانا چاہتے ہیں کہ ہم کسی اور طبقے کو محنت کش طبقے کے مفادات سے کھیلنے نہیں دینگے۔ انہوں نے کہا کہ صنعتی شعبے میں خواتین ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہیں اور ہم ایسے اقدامات اٹھائینگے کہ خواتین ورکرز کے مفادات کا زیادہ سے زیادہ تحفظ یقینی بنایا جاسکے۔ قبل ازیں سینئر مزدور رہنما حبیب الدین جنیدی نے اپنے خطاب میں کہا کہ مشیر محنت سعید غنی خود بھی بنیادی طور پر ایک ٹریڈ یونین کارکن ہیں اور وہ بہت بہتر انداز میں محنت کشوں کے مسائل کو سمجھتے اور ادراک رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مزدور طبقے کو لاتعداد مسائل کا سامنا ہے لیکن ہم سمجھتے ہیں کہ نوجوان مشیر محنت سعید غنی اپنی شب وروز محنت سے وزارت محنت کو ایک فعال مزدور دوست اور ترقی پسند ادارے میں تبدیل کر دینگے۔ انہوں نے کہا کہ صوبہ سندھ کے محنت کش عوام پاکستان پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت کی جانب سے بطور مشیر محنت مقرر کرنے پر بھرپور خیر مقدم کرتے ہوئے حمایت کرتے ہیں۔ پائلر کے ڈائریکٹر کرامت علی نے اپنے خطاب میں کہا کہ سعید غنی کی بطور مشیر محنت تقرری مزدور طبقے کے لئے خوشخبری ہے اور پائلر کے ادارے کی جانب سے ہم بھرپور تعاون کا یقین دلاتے ہیں۔ پیپلز لیبر بیورو کے مرکزی رہنما خواجہ محمد اعوان نے کہا کہ مزدوروں کے مسائل حل کرنا پیپلز پارٹی کی ترجیحات میں شامل ہے۔ اس موقع پر ہال میں موجود سینکڑوں مزدور رہنماؤں نے مشیر محنت کو سندھ کے مزدور طبقے کی حمایت کا یقین دلایا آخر میں مزدور رہنماؤں کی جانب سے سعید غنی کو اجرک، گلدستہ اور تحائف پیش کئے گئے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...