بھارتی وزیرداخلہ کی آمدکیخلاف جماعۃ الدعوۃ کا اسلام آباد میں احتجاج

بھارتی وزیرداخلہ کی آمدکیخلاف جماعۃ الدعوۃ کا اسلام آباد میں احتجاج

  



اسلام آباد( سٹاف رپورٹر)جماعۃ الدعوۃ کی جانب سے بھارتی وزیر داخلہ کی پاکستان آ مد کے خلاف مختلف علاقوں میں احتجاج مسلسل جاری ہے ، گزشتہ روز ترنول ، جی الیون ، ایف ایٹ سمیت دیگر مراکز میں بھی احتجاج کیا گیا ، جبکہ مختلف علاقوں میں مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے بھارتی مظالم اور تحریک آزادی جموں کشمیر کے حوالہ سے ملٹی میڈیا بریفنگ بھی دی جا رہی ہے ۔ آج بروز جمعہ جماعۃ الدعوۃ کی اپیل پر تمام مساجد میں علماء کرام مقبوضہ کشمیر میں تحریک آزادی اور کشمیریوں کی جاری جدوجہد کو خطابات جمعہ کا موضوع بنائیں گے ، بعد نماز جمعہ جامع مسجد آئی ایٹ مرکز کے باہر بڑا احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا جماعۃ الدعوۃ اسلام آباد کے مسؤل شفیق الرحمن نے مختلف مراکز میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چوہدری نثار کی جانب سے بھارتی راج ناتھ کی موجودگی میں کشمیر کے متعلق دو ٹوک موقف کو پوری قوم خراج تحسین پیش کرتی ہے ، چوہدری نثار نے آزادی کشمیر کے حوالہ سے قوم کی ترجمانی ہے اور بھارتی ریاست دہشت گردی کا پردہ چاک کیا ہے شفیق الرحمن نے کہا کہ گزشتہ روز وفاقی دارالحکومت میں دن بھر بھارتی وزیر داخلہ کی آمد کے خلاف مظاہروں نے کشمیریوں کی یکجہتی کا پیغام دیا ہے ، یہ ثابت ہو گیا ہے کہ حکومت کی مجبوری ہو سکتی ہے لیکن پاکستانی قوم کی کوئی مجبوری نہیں وہ آزادی کی جدوجہد میں کشمیریوں کے ساتھ کھڑی ہے انہوں نے کہا کہ حکمران عالمی اداروں کے سامنے بھارتی فوج کی درندگی بے نقاب کرنے کے لیے سفارتی مشن کو متحرک کریں ، اسلام آباد میں موجود تمام ممالک کے سفیروں کو واضح پیغام دینا چاہیے کہ بھارت اس وقت جنگی جرائم میں ملوث ہے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر اسے دہشت گرد ملک قرار دلانے کے لیے حکومت کو سنجیدگی سے کوششیں کر نی چاہیے انہوں نے کہا کہ بھارتی فوج معصوم بچوں، عورتوں اورنوجوانوں کو پیلٹ گن سے نشانہ بنا رہی ہے۔ سینکڑوں افراد کی بینائی ضائع ہونے پر بھی بین الاقوامی طاقتوں کا ضمیر بیدار نہیں ہوا۔ حقوق انسانی کے نا م نہاد علمبردار اداروں نے بھی مسلمانوں کے حوالہ سے دوہرا معیار اپنا رکھا ہے۔بھارت سرکار کشمیریوں کا پانی، بجلی بند کر کے بدترین دہشت گردی کا ارتکاب کر رہی ہے۔ غذائی قلت کا شکار کشمیری مسلمانوں کو مشکل وقت میں تنہا نہیں چھوڑیں گے بلکہ ان کی بھرپور امداد کا فریضہ سرانجام دیں گے۔شفیق الرحمن نے کہاکہ ہندوستان نے کشمیری مسلمانوں پر مظالم کا جو سلسلہ شروع کیا اس میں ستر سے زیادہ لوگ شہید ہزاروں زخمی ہوئے ہیں۔ کشمیریوں پر ایسے ہتھیار وں کا استعما ل کیا جارہا ہے جس سے انکی آنکھیں ضائع ہو رہی ہیں اور لوگ مختلف قسم کے جلد اور سینے کے امراض میں مبتلا ہو رہے ہیں۔ہم سمجھتے ہیں کہ بھارت کے ساتھ ساتھ کشمیری مسلمانوں کے قتل عام کی ذمہ دار وہ صلیبی و یہودی قوتیں بھی ہیں جو مودی سرکار کو نہتے کشمیریوں پر ظلم و ستم کی شہ دے رہی ہیں انہوں نے کہاکہ جدوجہد آزادی کشمیر جاری ہے اور جاری رہے گی۔مظلوم کشمیریوں کو کسی صورت غاصب بھارت کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑیں گے

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...