شہرام ترکئی کی زیرصدارت آئی ٹی کے سالانہ ترقیاتی پروگرام بارے جائزہ اجلاس

شہرام ترکئی کی زیرصدارت آئی ٹی کے سالانہ ترقیاتی پروگرام بارے جائزہ اجلاس

  



پشاور( پاکستان نیوز)خیبرپختونخوا کے سنےئر وزیر صحت و انفارمیشن اینڈ ٹیکنالوجی شہرام خان ترکئی کی زیر صدارت جمعرات کے روز آئی ٹی ڈیپارٹمنٹ کے کانفرنس روم پشاور میں ایک اجلاس منعقد ہوا جس میں محکمہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے سالانہ ترقیاتی پروگرام کے جاری اور نئے منصوبوں کے حوالے سے تفصیل سے جائزہ لیا گا۔اجلاس میں ایڈیشنل سیکرٹری انفارمیشن ٹیکنالوجی، ڈائریکٹر آئی ٹی ،ڈائریکٹر آئی ٹی،منیجنگ ڈائریکٹر آئی ٹی بورڈ اورچیف پلاننگ آفیسر کے علاوہ دیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی۔اس موقع پر صوبائی وزیر کومحکمہ آئی ٹی کے تحت تمام جاری اور نئے منصوبوں کے بارے میںآگاہ کیا گیا۔اجلاس کے شرکاء کو مختلف منصوبوں کی جلد تکمیل کی ہدایت کرتے ہوئے صوبائی وزیر نے آئی ٹی ڈیپارٹمنٹ میں سوشل میڈیا ٹیم کے جلد تشکیل پر زور دیتے ہوئے کہا کہ مختلف شعبوں میں حکومتی اصلاحات کی پروجیکشن ازحد ضروری ہے۔ انہوں نے کہاکہ آئی ٹی ڈیپارٹمنٹ کے تحت عوامی مفادات کے حامل منصوبے جس میں خیبر پختونخوا اوپن وائی فائی، سیٹیزن فیسیلیٹیشن سنٹر، ایگریکلچر کلاؤڈ، مائیکرو سافٹ اور ہاسپیٹل منیجمنٹ سسٹم شامل ہیں پر کام کی رفتار تیز کیا جائے ۔واضح رہے کہ خیبر پختونخوا اوپن وائی فائی سکیم کے ذریعے سرکاری یونیورسٹیوں اور کالجوں کے طلباء کو فری انٹرنیٹ کی فراہمی، سیٹیزن فیسیلیٹیشن سنٹر سکیم کے تحت عوام کو ایک چھت کے نیچے سہولیات جیسے ڈیتھ سرٹیفکیٹ ،ڈومیسائل، لائسنس اور دیگر سہولیات کی فراہمی،موبائل گورننس سکیم کے ذریعے عوام کو سہولیات اورمعلومات کی دستیابی کے علاوہ ایک اور اہم پراجیکٹ ایگریکلچر کلاؤڈ ہے جس سے کاشتکاروں کو ایس ایم ایس کے ذریعے موسمی اورزراعت سے متعلق دیگر معلومات میسر ہونگی۔مزید مائیکروسافٹ کمپنی کے ساتھ معاہدے کے مطابق کمپنی صوبے میں نہ صرف سرمایہ کرے گی بلکہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے طلباء کو تربیت اور روزگار کے مواقع بھی فراہم کرے گی۔اسی طرح ہاسپیٹل منیجمٹ سسٹم کے تحت پہلے مرحلے میں حیات آباد میڈیکل کمپلیکس کو کمپوٹرائز کیا جارہاے ہے جس سے مریضوں کے ٹیسٹ مریض اور ڈاکٹرز اپنے موبائل میں دیکھ سکیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...