چارسدہ میں سیشن کورٹ کے قریب دھماکے غفلت کا نتیجہ ہیں ،بشیر عمرزئی

چارسدہ میں سیشن کورٹ کے قریب دھماکے غفلت کا نتیجہ ہیں ،بشیر عمرزئی

  



چارسدہ (بیورو رپورٹ) رکن قومی اسمبلی مولانا سید گوہر شاہ اور تحصیل ناظم خلیل بشیر خان عمر زئی نے چارسدہ پولیس اور بی ڈی ایس کے استعداد کار اور پیشہ ورانہ صلاحیتوں پر سوالات اٹھا لئے ۔ بی ڈی ایس اور پولیس کی غفلت اور لا پر واہی کی وجہ سے سیشن کورٹ کے قریب دوسرا دھماکہ ہوا جس میں پانچ افرار زحمی ہو گئے ۔ بی ڈی ایس کا یہی حال رہا تو اس قسم کے واقعات رونما ہو تے رہیں نگے ۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز سیشن کورٹ کے قریب دو گھنٹے کے اندر وقفے وقفے سے دو بم دھماکوں کے حوالے سے رکن قومی اسمبلی مولانا سید گوہر شاہ اور تحصیل ناظم خلیل بشیر خان عمر زئی نے گہرے غم و عصہ کا اظہار کر تے ہوئے کہا کہ پہلے دھماکے کے بعد بی ڈی ایس حکام اور پولیس نے علاقہ کو کلےئر نہیں کیا تھا اور ٹی ایم اے ملازمین کو جائے وقوعہ پر صفائی ستھرائی پر لگا دیا کہ اس دوران وہاں دوسرا دھماکہ ہو ا ۔ انہوں آئی جی خیبر پختونخوا اور ڈی پی او چارسدہ سے اس حوالے سے انکوائری کا مطالبہ کیا اور صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا کہ چارسدہ جیسے حساس ضلع میں بی ڈی ایس کے ماہر ٹیم تعینات کی جائے ۔ انہوں نے صوبائی اور مرکزی حکومت سے متاثرہ ٹی ایم اے ملازمین کے لئے حصوصی پیکج او ر سرکاری خرچ پر علاج معالجہ کا بھی مطالبہ کیا

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...