الیکشن کمیشن کو دوبارہ گنتی پر اعتراض کیوں؟

الیکشن کمیشن کو دوبارہ گنتی پر اعتراض کیوں؟

 اے این پی کے رہنما غلام احمد بلور نے کہا ہے کہ میری نظر میں جن حلقوں میں فارم 45 نہ دینے کی شکایات ہیں اور دھاندلی کی واضح شکایات ہیں۔ ان حلقوں کو دوبارہ کھول دینا چاہئے اور بہتر تو یہ ہوگا کہ ان حلقوں میں نتائج کو کالعدم قرار دیتے ہوئے انتخابات ہی دوبارہ کروا دئیے جائیں تاکہ دودو کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے، وہ ایشو آف دی ڈے میں اظہار خیال کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ دھاندلی کے معاملے پر تمام اپوزیشن جماعتوں کا موقف ایک ہے اگر دھاندلی نہیں ہوئی تو الیکشن کمیشن کو دوبارہ گنتی کروانے پر کیا اعتراض ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر الیکشن کمیشن نے بات نہ سنی تو ملک بھر میں بڑی تحریک شروع ہوسکتی ہے جو سب کو بہا کر لے جائے گی۔

مزید : صفحہ اول