ووٹ نہ دینے کا رنج، جاگیردار کا دو محنت کش بھائیوں پر تشدد

ووٹ نہ دینے کا رنج، جاگیردار کا دو محنت کش بھائیوں پر تشدد

میلسی(نمائندہ پاکستان)ووٹ نہ دینے پرجاگیر دار نے دو محنت کش بھائیوں کواپنے غنڈوں کے ذریعے زبر دستی اٹھوا لیا اور ڈیرے پر لا کر تشدد کا نشانہ بنا ڈالا محنت کش بھائیوں کاٹریکٹر بھی چھین لیا ،پر پولیس نے موقع پر پہنچ کہ دونوں بھائیوں کو بازیاب کروایا لیکن با اثر جاگیر دار کیخلاف مقدمہ درج (بقیہ نمبر37صفحہ12پر )

نہ کیا موضع پل شہیداں کے رہائشی بھائیوں محمد جاوید اور محمد خورشید نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ وہ کاشتکاری کے ذریعے اپنا گزر بسر کرتے ہیں اس سلسلہ میں رضا کالونی کے ادویات ڈیلر محمد طاہر ، عمر علی وغیرہ سے ادھار پر زرعی ادویات حاصل کیں جنہوں نے مبینہ طور پر جعلی ادویات دوگنے نرخوں پر لگاتے ہوئے خود ساختہ طور پر لاکھوں روپے بنا لیئے اور ہمیں مقامی جاگیر دار انس عالم قصوری کے ڈیرے پر زبردستی بلوا لیا جس نے ادویات ڈیلروں کی طرف داری کرتے ہوئے زبردستی اقساط بنا کر کہا کہ فوری رقم ادا کرو ورنہ اچھا نہ ہو گا اس دوران الیکشن آیا تو انس عالم قصوری نے اپنے کزن جہانگیر عالم قصوری کو ہمارے گھر بھیجا اور کہا کہ ان کے امیدوار کے انتخابی نشان بلے کو ووٹ دینا جبکہ اسی گروپ کے میاں شہزاد ارائیں نے انہیں کہا کہ یہ لوگ بلے کی بجائے شیر کو ووٹ دیں گے جاگیر داروں کی ان دھمکیوں سے خوفزدہ ہو کر ہم نے پولنگ کے روز کسی کو بھی ووٹ نہ ڈالا جس پر جاگیر دار مزید مشتعل ہو گیامحمد جاوید نے بتایا کہ گذشتہ روز میں اپنے بھائی خورشید کے ہمراہ کھیت میں موجود تھا کہ چار نامعلوم افراد گاڑی سے اترے اور موٹر سائیکل سوارمحمد طاہر، عمر علی اور محمد عامر وغیرہ کی نشاندہی پر ہمیں زدو کوب کرنا شروع کر دیا اور اسلحہ کے زور پر زبردستی گاڑی میں ڈال کر انس عالم قصوری کے ڈیرے میں لے آئے جبکہ لاکھوں روپے مالیت کا ہمارا ٹریکٹر بھی ساتھ ڈیرے میں لاکر کھڑا کر دیا اس دوران انس عالم قصوری نے اپنی موجودگی میں اپنے غنڈوں کے ذریعے دونوں بھائیوں کو برہنہ کرادیا اور سوٹوں اور ہنٹر کے ذریعے بہیمانہ تشدد کرایا اور کہا کہ ووٹ نہ دینے کا تمہیں مزہ چکھاتے ہیں اس دوران ہم نے جاگیر دار اور اس کے ساتھیوں کی منت سماجت کی لیکن انہوں نے اپنا ظلم جاری رکھا علاقے کے لوگوں کو پتہ چلا تو جاگیر دار نے ڈیرے کے دروازے بند کروا لیئے اور تشدد کراتا رہا اس دوران ہماری والدہ نے 15پر کال کی جس پر پولیس تھانہ میرا ں پو ر موقع پر پہنچ گئی اور ہمیں جاگیر دار کے چنگل سے رہائی دلوائی لیکن موقع سے کسی کو گرفتار نہ کیا اور ٹریکٹر لیکر واپس تھانہ آ گئی متاثرہ بھائیوں نے بتایا کہ انہوں نے ملزمان محمد طاہر، عمر علی ، محمد عامر، منشی ہاشم علی، محمد جاوید اور دیگر چار نامعلوم افراد کیخلاف مقدمہ کے اندراج کیلئے تحریری درخواست ایس ایچ او تھانہ میراں پو ر کو دی لیکن پولیس نے تا حال جاگیر دار اور اس کے سرپرستوں کے خوف سے ملزمان کیخلاف مقدمہ درج نہیں کیا اور جاگیردار دوبارہ سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہا ہے انہوں نے کہا کہ تحریک انصا ف کے قائد عمران خان نے غریب کیلئے فوری انصاف کا اعلان کیا ہے لیکن ان کی جماعت کا مذکورہ زمیندار اکے حلف اٹھانے سے پہلے ہی علاقے میں ظلم و ستم کا بازار گرم کر چکا ہے آئی جی پنجاب، آر پی او ملتان اور ڈی پی او وہاڑی فوری نوٹس لیتے ہوئے ملزمان کیخلاف مقدمہ درج کروائیں اور ہمیں انصاف دیا جائے ۔

تشدد

مزید : ملتان صفحہ آخر