ڈھاکہ میں سکول کے لڑکوں نے ان لڑکیوں کے گرد دیوار کیوں بنائی ہوئی ہے؟ وجہ اتنی شرمناک کہ آپ سوچ بھی نہیں سکتے

ڈھاکہ میں سکول کے لڑکوں نے ان لڑکیوں کے گرد دیوار کیوں بنائی ہوئی ہے؟ وجہ ...
ڈھاکہ میں سکول کے لڑکوں نے ان لڑکیوں کے گرد دیوار کیوں بنائی ہوئی ہے؟ وجہ اتنی شرمناک کہ آپ سوچ بھی نہیں سکتے

  

ڈھاکہ(مانیٹرنگ ڈیسک) بنگلہ دیش کے دارالحکومت ڈھاکہ میں طلباءو طالبات ٹریفک حادثات کی ہوشربا شرح کے خلاف کئی دن سے سراپا احتجاج ہیں۔ گزشتہ روز وہاں سے ایک ایسی تصویر منظر عام پر آئی جس میں لڑکوں نے طالبات کے گرد حصار بنا رکھا ہوتا ہے۔ ان لڑکوں کے لڑکیوں کے گرد اس طرح حفاظتی حصار بنانے کی وجہ ایسی شرمناک تھی کہ کوئی سوچ بھی نہیں سکتا۔ ڈھاکہ ٹربیون کے مطابق ٹریفک حادثات کے خلاف احتجاج کرنے کی وجہ سے چار لڑکیوں کے ساتھ جنسی زیادتی کر ڈالی گئی تھی جس کے بعد لڑکوں کی طرف سے طالبات کے گرد حصار بنانے کی یہ تصویر منظرعام پر آئی۔

معلوم ہوا ہے کہ ان لڑکیوں کو بس اور ٹرک ڈرائیوروں کی تنظیم کے کارندوں نے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا جنہیں حکومتی آشیرباد حاصل ہے اور کوئی ان کا کچھ نہیں بگاڑ سکتا۔ اس بس ٹرک ڈرائیور لابی کا سربراہ ایک وزیر ہے۔ رپورٹ کے مطابق ٹریفک حادثات کے خلاف طلبا و طالبات کا یہ احتجاج 29جولائی کے روز شروع ہوا جب ایک ڈرائیور نے طلبہ پر بس چڑھا دی، جس سے دو طالب علموں کی موت واقع ہو گئی۔ اس کے بعد طلبہ کے احتجاج میں کئی پرتشدد واقعات رونما ہو چکے ہیں جن میں ان چار لڑکیوں کے ساتھ جنسی زیادتی بھی شامل ہے۔ تاحال ان تمام واقعات میں کوئی گرفتاری نہیں کی گئی۔

مزید : بین الاقوامی