امیر جے یو آئی (ف)مولانا فضل الرحمن 13 برس بعد وزرا کالونی سے رخصت ہو گئے

امیر جے یو آئی (ف)مولانا فضل الرحمن 13 برس بعد وزرا کالونی سے رخصت ہو گئے
امیر جے یو آئی (ف)مولانا فضل الرحمن 13 برس بعد وزرا کالونی سے رخصت ہو گئے

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی) ف کے امیرمولانا فضل الرحمٰن بالآخر تقریباً 13 برس بعد وزرا کالونی سے رخصت ہو گئے ہیں۔

نجی ٹی وی چینل” ہم نیوز“ کے مطابق مطابق مولانا فضل الرحمٰن نے وزرا کالونی کے تمام واجبات ادا کرکے سامان اٹھا لیا ہے اور اپنا سیاسی ڈیرہ سینیٹر طلحہ محمود کے فارم ہاو¿س پر جما لیا ہے، امیر جے یو آئی نے انتخابات میں شکست کے بعد وزرا کالونی کا بنگلہ نمبر22 چھوڑنے کا فیصلہ کیا،مولانا فضل الرحمن 1993 میں بے نظیر بھٹو جبکہ 2008 سے 2018 تک آصف زرداری اور نوازشریف کی حکومتوں میں چیئرمین کشمیر کمیٹی رہے،مولانا فضل الرحمن نے اپوزیشن میں رہتے ہوئے بھی حکومت سے مصالحت کی اور تقریبا پونے 3 سال وزرا کالونی میں رہائش پذیر رہے۔

مولانا فضل الرحمن، چیئرمین کشمیر کمیٹی کے عہدے پر فائز ہو کر وفاقی وزیر کے برابر تمام مراعات حاصل کرتے رہے، 2008 سے 2018 یعنی آصف علی زرداری اور سابق وزیراعظم نواز شریف کے دور حکومت میں بھی مولانا فضل الرحمن کشمیر کمیٹی کے چیئرمین کی حیثیت سے مسلسل 10 برس تک وزرا کالونی میں رہائش پذیر رہے۔

تقریباً 13 سال بعد ایسا ہوا ہے کہ مولانا فضل الرحمن کی حکومت سے مصالحت نہیں ہو سکی اور انہیں ناصرف کشمیر کمیٹی کے چیئرمین کے عہدے سے دستبردار ہونا پڑا بلکہ اپنی برسوں کی قیام گاہ کو بھی خیرباد کہنا پڑا۔

مزید : قومی /ڈیلی بائیٹس