ایم فائیو ‘ ملتان تا سکھر سیکشن مقررہ مدت سے قبل مکمل ‘ انسپکشن شروع

  ایم فائیو ‘ ملتان تا سکھر سیکشن مقررہ مدت سے قبل مکمل ‘ انسپکشن شروع

  

شجاع آباد(نامہ نگار)شجاع آباد سے گزرنے والا سی پیک پشاور کراچی موٹروے چائنیز اور پاکستانی انجینئرز اور سٹاف کی دن رات محنت کے باعث ;77;5 ملتان تا سکھر سیکشن مقررہ مدت (بقیہ نمبر47صفحہ7پر )

سے قبل مکمل کرلیا گیا ہے، انسپیکشن کیلئے این ایچ اے کے حوالے کردیاگیا،پراجیکٹ سے پاکستان کے ساتھ ساتھ شجاع آباد اور جلال پور جیسے چھوٹے چھوٹے شہروں میں معاشی سرگرمیاں بڑھیں گی،تفصیلات کے مطابق چیف سیکیورٹی کنسلٹنٹ سی پیک پشاور کراچی موٹر وے سیکشن 7 کرنل ریٹائرڈ اکرم انجم نے نیشنل پریس کلب کے صحافیوں کو بتایا کہ سی پیک پشاور کراچی موٹروے پراجیکٹ ;77;5 ملتان تا سکھر سیکشن مکمل ہو چکا ہے ۔ پراجیکٹ انسپیکشن کیلئے این ایچ اے کے حوالے کر دیا گیا ہے اور اس کے بعد عنقریب حکومت پاکستان کے حوالے کر دیا جائے گا ۔ موٹر وے سے ملتان اور سکھر کے درمیان فاصلہ 465 کی بجائے 392 کلومیٹرز رہ گیا ہے اور یہ فاصلہ ساڑھے سات گھنٹوں کی بجائے صرف ساڑھے تین گھنٹوں میں طے کیا جائے گا ۔ 6 لائینوں پر مشتمل اس موٹروے کو 120کلو میٹر فی گھنٹہ تک کی رفتار والی گاڑیوں کیلئے ڈیزائن کیا گیا ہے ۔ ہر 5کلو میٹر کے بعد سیکیورٹی کیمرے جبکہ ہر 56 کلومیٹر کے بعد کنٹرول روم بنائے گئے ہیں ۔ ;77;5 پر دریائے ستلج کے پل کے علاوہ 134 چھوٹے بڑے پل، 10 فلائی اوورز، 11 انٹر چینج، آب پاشی کیلئے 1107 نہری کھال، جانوروں کیلئے107 راستے، 33 انڈر پاس اور 72 بکس نما راستے بنائے گئے ہیں ۔ اس پراجیکٹ پر چائینیز، پاکستانی انجینیئرز اور سٹاف سمیت سیکیورٹی فورسز، پاک آرمی، رینجرز، پولیس اور سپیشل پروٹیکشن یونٹ نے دن رات کام کرکے ریکارڈ مدت میں مکمل کیا اور اس کی بدولت پاکستان کے ساتھ ساتھ شجاع آباد اور جلال پور جیسے چھوٹے چھوٹے شہروں میں معاشی سرگرمیاں بڑھیں گی ۔

ایم فائیو

مزید :

ملتان صفحہ آخر -