دریائے سندھ ،پانی بہاءو کٹاءو میں تیزی ،مزید سینکڑوں بستیاں متاثر ہونیکا خدشہ

  دریائے سندھ ،پانی بہاءو کٹاءو میں تیزی ،مزید سینکڑوں بستیاں متاثر ہونیکا ...

  

کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر)درےائے سندھ میں تونسہ بیراج کے مقام پردرمےانے درجے کا سیلاب ،3لاکھ43ہزارکیوسک پانی کاسیلابی ریلا گزر رہا ہے،بارشیں ہونے سے پانی کی سطح ا بلند اور دریائی کٹاو شدت اختیار کرگیا، تونسہ بیراج کی ڈاون سٹریم پر کٹاو جاری، متعدد بستیاں فصلیں سکول مساجد دریا برد ، مزید سینکڑوں بستیاں متاثر ہونے کا خدشہ ہے، تفصیل کے مطابق ملک کے سب سے بڑے دریائے سندھ میں تونسہ بیراج کے مقام (بقیہ نمبر22صفحہ12پر )

پربدستوردرمےانے درجے کا سیلاب ہے ، تونسہ بیراج سے3لاکھ 43ہزار کاسیلابی ریلا گزر رہا ہے ،ملک بھر میں ہونے والی بارشوں کے باعث دریائے سند ھ میں پانی میں اضافے کا امکان ہے، دوسری طرف سیلابی ریلے کے باعث گزشتہ کئی روز سے دائرہ د ین پناہ، احسانپور، پہاڑ پور کے بیٹ کے علاقوں میں رہائش پذیر لوگوں کو محفوظ مقامات پر منتقل کیا جا رہا ہے، کسی بھی ممکنہ خطرے کے پیش نظر عباس والا بند کی مسلسل کڑی نگرانی کی جارہی ہے،محکمہ انہار کی موبائل ٹی میں عباس والا بند کے علاوہ دیگر حفاظتی بندوں اور پشتوں پر دن رات گشت کر رہی ہے ،دوسری جانب دریائے سندھ میں کالا باغ اور چشمہ کے مقام پر پانی میں اضافہ شروع ہو گیا ہے، چشمہ کے مقام پر3لاکھ61ہزار کےوسک پانی کا بہاءو ہے جبکہ کالا باغ میں پانی کی بہاءو میں کمی آنا شروع ہو گئی اور اس وقت کالا باغ میں 3لاکھ22ہزار پانی کا بہاءو ہے جو کہ خوش آئندہے ،تونسہ بیراج کے بیٹ کے کچے کے علاقوں سمیت دائرہ دین پناہ ، احسانپور، پہاڑ پور کے بیٹ کے علاقوں میں سیلابی پانی داخل ہو گیا ہے،مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت نقل مکانی شروع کردی،انتظامےہ کی طرف سے کوئی حفاظتی تدابیر نہیں کی گئی، تونسہ بیراج کے بیٹ کے کچے کے علاقوں نشان والا،خادم والی،لومڑ والا،فقیر والی سمیت دائرہ د ین پناہ، احسانپور، پہاڑ پور کے بیٹ کے علاقوں میں سیلابی پانی داخل ہو گیا ہے،دوسری طرف دریائے سندھ تونسہ بیراج کے مقام پر پانی کی سطح بلند ہونے سے دریائی کٹاو شدت اختیار کرگیا، تونسہ بیراج کی ڈاون سٹریم پر کٹاو جاری، متعدد بستیاں فصلیں سکول مساجد دریا برد ، مزید سینکڑوں بستیاں متاثر ہونے کا خدشہ، دریائے سندھ کا پانی گھروں کے قریب پہنچ گیا،موضع پرہاڑ غربی، موضع بھبھڑ والا، موضع لون والا میں دریائے سندھ کے ٹارگٹ پر ;200; چکے ہیں ۔

دریائی کٹاءو

مزید :

ملتان صفحہ آخر -