یوتھ فورم فار کشمیر کا بھارتی جارحیت کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

  یوتھ فورم فار کشمیر کا بھارتی جارحیت کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

  

لاہور (سٹی رپورٹر)یوتھ فورم فار کشمیر کے زیر اہتمام بھارتی آئین کے آرٹیکل 35Aکو ختم کرنے اور کلسٹر بموں کے شہری آبادی پر استعمال کیخلاف شملہ پہاڑی چوک پراحتجاجی مظاہرہ کیا گیا،جس کی قیادت چیف آرگنائزر طارق احسان غوری نے کی۔انہوں نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت اپنے مذموم عزائم کو عملی شکل دینے کیلئے مقبوضہ کشمیر کا آئینی و جغرافیائی حلیہ تبدیل کر کے اسے بھارت کا جبراََحصہ بنانے کی سازش کر رہا ہے۔ مودی سرکار نے مکروہ خواہش کی تکمیل کیلئے حریت قیادت کو راستے کی بڑی رکاوٹ سمجھ کر قید کر دیا ہے۔پورے کشمیر کو فوجی چھاؤنی میں تبدیل کر دیا ہے،بھارتی فورس CRPFکی تعداد میں 25ہزار کا اضافہ کر دیا گیا ہے اور چھاپہ مار مہم کو بڑھانے کیلئے مزید فورس مانگ لی ہے۔

بھارتی فوج اور پولیس اہلکاروں نے نوجوانوں کو حراست میں لے لیا ہے اور جنوبی کشمیر میں ہائی الرٹ کر دیا ہے۔طارق غوری نے مزید کہا کہ آرٹیکل35Aکشمیر کے باشندوں کی پہچان ہے اسکی منسوخی کسی بھی قیمت پر نہیں کرنے دی جائیگی اور نہ ہی کسی سپیشل قانون کے تحت بیرون کشمیر سے غیر مسلم کو لاکر آباد کرنے کی اجازت دی جائے گی۔ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ اقوام متحدہ اپنی حق خود ارادیت کی قراردادوں پر عمل درآمد کرانے کیلئے فوری رائے شماری کرانے کا انتظام کیا جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -