جمہوریت کے ساتھ گھناؤنا کھیل کھیلا جا رہا ہے: جمشید مہمند

     جمہوریت کے ساتھ گھناؤنا کھیل کھیلا جا رہا ہے: جمشید مہمند

  

شیرگڑھ(نامہ نگار) ایم پی اے جمشید خان مہمند نے کہا ہے جمہوریت کے ساتھ گھناوناکھیل کھیلا جا رہا ہے سینٹ میں عدم اعتما د کی تحریک نمٹاتے وقت اقلیت اکثریت پر غالب کردیا گیا یہ ہمارے ملک کی پارلیمانی تا ریخ کا انوکھا حیران کردینے والا ڈرامہ ہے 36 افراد کیسے 64 سے جیت گئے عام انتخابات کی دھا ندلی کاالزامات سینٹ میں عدم اعتماد کی تحریک پر کارروائی نے درست ثابت کر دیئے اپنے حلقہ کے عوام کے مسائل کے حل کیلئے کسی بھی حد تک جانے سے گریز نہیں کروں گا حلقہ کے عوام کا حق حکومت سے چھین کر لا ؤں گا پورے پی کے 55 کے گھر گھر کو سوئی گیس کی سہولت کی فراہمی کے منصوبے پر کا م تیزی سے جا ری ہے بہت جلد یہ سہولت ہر گھر کو پہنچادوں گا وہ اپنی رہا ئشگاہ پر آئے ہو ئے مختلف علاقوں کے وفود کے ساتھ گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ میرا خاندان خدمت کی بنیاد پر سیا ست میں آیا ہے اور اپنے حلقہ نیا بت کے عوام کا بے لاگ بلا تفریق خدمت کرنے کا یہ سلسلہ جا ری رکھوں گا انہوں نے کہا کہ پی کے 55 میں بجلی کا مسلہ کا فی حد تک حل کر چکا ہوں حلقہ کے گھر گھر کو سوئی گیس کی فراہمی کے منصوبے پر کا م جا ری ہے اور بلا امتیاز ہر گھر کو یہ سہولت پہنچادایا جا ئے گا میں کسی خاص گروہ اور طبقے کا ایم پی اے نہیں ہوں میں پی کے 55 کے ہر با شندے کا ایم پی اے ہوں اور ہر مکتبہ فکر کے لوگوں کی خدمت اپنے اوپر ان کا حق سمجھتا ہوں انہوں نے کہا کہ حکومت بلا امتیاز حزب اختلاف اور حزب اقتدار کے اراکین اسمبلی کو برابری کی بنیاد پر ترقیاتی فنڈز جا ری کر یں تاکہ عوام کا بلا تفریق خدمت ہو سکے انہوں نے سینٹ میں چیرمین اور ڈی پٹی چیرمین کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک کو ایک جمہوری عمل قرارد ے دیا اور کہا کہ عام انتخابات کی طرح ایک بار پھر ایک معزز ادارے کے اندر ایک جمہوری عمل کو سوچھی سمجھی سازش کتے تحت مشکوک بنا دیا گیااس عجیب وغریب عمل کے بعد جمہوریت صرف مذاق کے حد تک جمہو ریت با قی رہی انہوں نے کہا کہ حکومت جمہو ریت کے ساتھ مذاق کا یہ سلسلہ بند کر کے ہر جمہوری عمل کو تکمیل تک پہنچنے دیا جا ئے اور اس میں روڑے اٹکانے کی ہر گز حما قت نہ کر یں یہ اس ملک اور قوم کے حق نہیں۔   

مزید :

پشاورصفحہ آخر -