بھارتی حکومت کشمیریوں کا جذبہ آزادی ختم نہیں کر سکتی،نعیم الدین

بھارتی حکومت کشمیریوں کا جذبہ آزادی ختم نہیں کر سکتی،نعیم الدین

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)پیس اینڈ جسٹس سوسائٹی پاکستان کے چیئرمین میاں نعیم الدین نے گزشتہ سال پانچ اگست کو بھارتی حکومت کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر کو خصوصی درجہ دینے والے آرٹیکل 370 اور35 اے کو یکطرفہ طور پرغیر قانونی اور غیر آئینی طریقے سے ختم کر کے لاک ڈاؤن کے ذریعے کشمیریوں کی نسل کشی کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دہشت گرد نریند ر مودی حکومت ان ترامیم سے کشمیر میں عوامی رائے عامہ کو تبدیل نہیں کرسکی اور نہ ہی کشمیریوں کے جذبہ حق خودارادیت کو کوئی آئینی ترامیم سے کچل سکتی ہے۔

گزشتہ روز صحافیوں سے گفتگو کرتے ہو ئے پیس اینڈ جسٹس سوسائٹی پاکستان کے چیئرمین میاں نعیم الدین نے کہا کہ بھارت مقبوضہ جموں و کشمیرمیں مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کیلئے لاکھوں ہندوؤں کو کشمیر کا ڈومیسائل دے رہاہے، بھارتی فوج کشمیریوں کا قتل عام کر رہی ہے ان کے گھروں اور املاک کو آگ لگائی جا رہی،بھارتی فوج 73 سال سے مسلسل ظلم و جبر کے ذریعے کشمیریوں کے جذبہ حریت کو ختم نہیں کر سکی،کشمیر یوں کی ثابت قدمی نے بھارتی منصوبوں کو خاک میں ملا دیاہے بھارت کا ظلم و ستم کشمیریوں کو آزادی کی نعمت سے نہیں روک سکتا، کشمیری شہدا کا خون ایک دن ضرور رنگ لائے گااور مقبوضہ کشمیر پاکستان کا حصہ بنے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -