بھارتی فوج کی تتہ پانی، درہ شیر خان سیکٹر زمین بلااشتعال فائرنگ، گولہ باری 

  بھارتی فوج کی تتہ پانی، درہ شیر خان سیکٹر زمین بلااشتعال فائرنگ، گولہ ...

  

 تتہ پانی(آن لائن) بھارتی فوج اوقات سے باہر ہوگئی، لائن آف کنٹرول پر تتہ پانی،درہ شیرخان سہڑہ سیکٹرز میں اچانک بلااشتعال شدید فائرنگ وگولہ باری شروع کردی جس سے7 خواتین سمیت 10 افراد زخمی، درجنوں رہائشی مکانات تباہ جبکہ درجنوں مویشی ہلاک وزخمی ہوگئے۔ تتہ پانی بٹل مدارپور اور تتہ پانی ہجیرہ روڈزپر ٹریفک گھنٹوں معطل رہی، شدیدزخمیوں کو تتہ پانی میں ابتدائی طبی امداد کے بعد ڈی ایچ کیوہسپتال کوٹلی ریفر کردیاگیا، ایمولینسوں کی عدم دستیابی کی وجہ سے زخمیوں کو ہسپتالوں میں پہنچانے کے سلسلہ میں شدید مشکلات کا سامنا رہا،جبکہ سیروتفریح کیلئے آنے والے سیاح بھی پھنسے رہے،پاک فوج کی جانب سے داندان شکن جواب نے دشمن کی گنوں کو خاموش کرادیا۔منگل کے روز صبح سویرے بھارتی فوج نے لائن آف کنٹرول پر تتہ پانی،درہ شیرخان سہڑہ سیکٹرز میں اچانک بلااشتعال شدید فائرنگ وگولہ باری شروع کردی اور ان سیکٹرز کے سویلین آبادی کے علاقوں درہ شیرخان، سہڑہ،تاہی،نمب، شمالی گرھڈ جنجوڑہ وغیرہ کو نشانہ بنایا۔ اس دوران ہیوی گنوں کا بے دریغ استعمال کیا گیا، جس کے نتیجہ میں سہڑہ کے مقام پر چوہدری فضل کریم مرحوم کے رہائشی مکان پر گولہ گرنے سے اُنکی اہلیہ شہناز بیگم، بیٹا محمد نعیم، دوبیٹیاں انیلہ اختر، سائرہ اختراور گھر مہمان آئی رشتے داردولڑکیاں عدیقہ دختر محمد شبیر،ثناء دختر محمد شاہپال زخمی ہوگئیں،جبکہ سہڑہ سے نسرین بیگم،روبینہ، التمش اور ذوالفقار احمد عرف کالا بھی زخمی ہوئے، زخمیوں کو فوری تتہ پانی ہسپتال لایا گیا، ابتدائی طبی امداد کے بعد شدید زخمیوں کوڈی ایچ کیوہسپتال کوٹلی ریفر کردیا گیا ہے۔گولہ باری کا سلسلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا اورتمام علاقے لرزتے رہے۔ گولہ باری سے سردار حکمداد خان،راجہ منظر خان سمیت دیگر درجنوں افراد کے رہائشی مکانات تباہ ومتاثرہ ہوئے۔ درجنوں مویشی ہلاک وزخمی ہوئے،عوام گھروں میں محصور ہوکررہ گئے۔ تتہ پانی بٹل مدارپور اور تتہ پانی ہجیرہ روڈزپر ٹریفک گھنٹوں معطل رہی۔ادھر پاک فوج کی جانب سے دندان شکن جواب نے دشمن کی گنوں کو خاموش کرادیا۔

بھارتی فائرنگ 

مزید :

صفحہ اول -