وزیر اعظم کو کنٹینر اترسے کراپوزیشن سے بات کرنا پڑے گی، خورشید شاہ

وزیر اعظم کو کنٹینر اترسے کراپوزیشن سے بات کرنا پڑے گی، خورشید شاہ

  

سکھر (این این آئی)پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما سید خورشید احمد شاہ نے کہا ہے کہ ان حالات میں وزیر اعظم کو کنٹینر سے اتر کر سیاستدانوں اور اپوزیشن سے بات کرنا پڑے گی، کشمیریوں کے حق میں ریلیاں اور مظاہرے 72 سال سے ہوتے آئے ہیں اب اس سے کام نہیں چلے گا۔ منگل کو پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما سید خورشید احمد شاہ،ان کی بیگمات، صاحب زادوں، داماد سمیت 18 افراد کیخلاف ایک ارب 23 کروڑ روپے سے زائد آمدن کے اثاثے بنانے کے الزام میں نیب کی جانب سے دائر کیے گئے ریفرنس کی سماعت سکھر کی احتساب عدالت میں ہوئی۔سید خورشید احمد شاہ کو ایمبولینس پر این آئی سی وی ڈی ہسپتال سے عدالت لایا گیا جبکہ ان کے صاحبزادے ایم پی اے فرخ شاہ، داماد صوبائی وزیر سید اویس شاہ و دیگر بھی عدالت میں پیش ہوئے۔سکھر کی احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما سید خورشید احمد شاہ نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کو دیوار سے لگانے کی کوشش کی جارہی ہے، کیا لاہور میں ہونے والی بارش، مسئلہ کشمیر، پیٹرول وچینی بحران کی ذمہ دار بھی سندھ حکومت ہے،انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کا گراف زیرو ہوچکا ہے اب یہ گورنر راج لگانے کی دھمکیاں دے رہے ہیں حالانکہ پنجاب اور کے پی کے میں ناکامی ان کا منہ چڑا رہی ہے۔

خورشید شاہ

مزید :

پشاورصفحہ آخر -