کرپشن اور دھوکہ دہی سے الیکشن جیتنے والوں سے جان چھڑاناہوگی، سراج الحق 

کرپشن اور دھوکہ دہی سے الیکشن جیتنے والوں سے جان چھڑاناہوگی، سراج الحق 

  

لاہور (آن لائن)امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہاہے کہ وزیراعظم کا کوئی وعدہ اور اعلان سامنے لانا مشکل ہے جس پر انھوں نے یوٹرن نہ لیا ہو۔ وہ کشمیریوں کے نام کے ہی سفیرہیں۔ مودی کے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کو ختم کرنے کے فاشسٹ اقدام کو دو سال گزر گئے، مگر اسلام آباد کے ایوانوں میں خاموشی چھائی ہے۔ مقبوضہ وادی میں لاکھوں انسان تہتر برسوں سے بھارت کے ظلم و استبداد کا شکار ہیں، مگر عالمی اداروں، مغربی طاقتوں نے مجرمانہ خاموشی اختیار کر رکھی ہے۔ پی ٹی آئی حکومت کی خارجہ پالیسی ناکامیوں کی مسلسل داستان ہے۔ معیشت، داخلہ و خارجہ محاذوں پر توجہ دینا ہو گی۔ تاجر پریشان جبکہ لاکھوں نوجوان بے روزگاری کی دلدل میں پھنس چکے ہیں۔ نظا م بوسیدہ اور حکمران دن رات قوم سے جھوٹ بولتے ہیں۔ ملک پر 45 ہزار ارب روپے کے قرضوں کے بوجھ کا ذمہ دار طبقہ خود عیاشیاں کر رہاہے۔ چند گھرانے چچا، بھتیجا، باپ اور بیٹا کی شکل میں ایوانوں میں براجمان ہیں جنھیں عوام کی نہ کوئی فکر تھی نہ ہے۔ کرپشن اور دھوکہ دہی سے الیکشن جیتنے والوں سے جان چھڑاناہوگی۔ قوم سنت حسینؓ کی پیروی کرتے ہوئے ظلم کے خلاف ڈٹ جائے۔ اسلام کے معاشی نظام سے رہنمائی لینا ہوگی۔ جماعت اسلامی الیکشن میں پورے ملک میں امیدوار کھڑے کرے گی۔ انتخابات میں قرآن و سنت کے منشور اور اپنے جھنڈے اور نشان کے ساتھ جائیں گے۔ انتخابی اصلاحات اور متناسب نمائندگی کے اصول کو اپنائے بغیر پائیدار جمہوریت قائم نہیں ہو سکتی۔ جمہوریت کو اسلامی اصولوں کے تابع کرنا ہو گا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے منصورہ میں مرکزی نظم کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں ملکی سیاسی صورت حال، کشمیر، جنرل اور بلدیاتی الیکشن اور تنظیمی امور سے متعلق تفصیلی تبادلہ خیال ہوا۔ اس بات کا فیصلہ کیا گیا کہ جماعت اسلامی عوام کے مسائل کے حل، مہنگائی، بے روزگاری اور سودی معیشت کے خلاف اور کرپشن فری پاکستان بنانے کے لیے اپنی جدوجہد جاری رکھے گی۔ سراج الحق نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں 5اگست 2019ء کے اقدام کے بعد ایک مسلسل لاک ڈاؤن کی سی کیفیت ہے۔ مقبوضہ وادی کے لوگوں پر عرصہ حیات تنگ کر دیا گیا ہے۔ 

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -