عوام سے رقم بٹورنے والا گرفتار ملزم  10 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

عوام سے رقم بٹورنے والا گرفتار ملزم  10 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

  

پشاور(نیوزرپورٹر)احتساب عدالت پشاور کے جج شاہد خان نے گاڑیوں کے کاروبار کے نام پر سادہ لوح لوگوں سے روپے بٹورنے کے الزام میں گرفتار سمبروسنز انٹرپرائزز پرائیویٹ لمیٹڈ کے مالک سمیع اللہ کو تفتیش کے لیے دس روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالہ کردیا۔ گزشتہ روز جب نیب کے اہلکاروں نے ملزم کو  عدالت میں پیش کیا تو اس دوران  نیب پراسیکیوٹر  سرتاج عدالت میں پیش ہوئے اور عدالت کو بتایا کہ ملزم سمیع اللہ سمبروسنز انٹرپرائزز (ایس ایم سی پرائیویٹ) لمیٹڈ کا مالک ہے اور دیگر ملزمان کے ساتھ مل کر عام لوگوں سے اقساط پر گاڑیوں کی فراہمی کے وعدے پر رقم وصول کرتے تھے۔ملزم کی جانب سے متاثرہ افراد سے درکار گاڑی کی کل قیمت کی 20فیصد ڈاؤن پیمنٹ کے طور پر لی گئی. تاہم کچھ عرصے بعد کمپنی کا دفتر بند پایا گیا اور کمپنی کا مالک سمیع اللہ رقم لے کر بھاگ گیاتھا ابھی تک نیب کو متاثرین کی جانب سے کروڑو روپے میں دعویداری موصول ہو چکی ہی گرفتار ملزم سے تفتیش کی ضرورت ہے لہذا ملزم کو تفتیش کے لیے جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالہ کیا جائے عدالت نے نیب کی جسمانی ریمانڈ کی استدعا منظور کرتے ہوئے ملزم کو دس روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالہ کردیا۔ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -