امریکی گلوکارہ کی طیارہ حادثے میں موت، لیکن اسے موت سے پہلے کیا خواب آتا رہا؟ جان کر حیرت کی انتہا نہ رہے

امریکی گلوکارہ کی طیارہ حادثے میں موت، لیکن اسے موت سے پہلے کیا خواب آتا رہا؟ ...
امریکی گلوکارہ کی طیارہ حادثے میں موت، لیکن اسے موت سے پہلے کیا خواب آتا رہا؟ جان کر حیرت کی انتہا نہ رہے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی گلوکارہ عالیہ 2001ءمیں ایک طیارے کے حادثے میں موت کے منہ میں چلی گئی تھیں۔ ان کی عمر اس وقت محض 22سال تھی۔ اب ان کے متعلق یہ حیران کن دعویٰ منظرعام پر آ گیا ہے کہ انہوں نے اپنی موت کی پیش گوئی کر رکھی تھی۔ دی سن کے مطابق اس حادثے سے محض ایک ماہ قبل عالیہ نے ایک جرمن میڈیا آﺅٹ لیٹ کو انٹرویو دیتے ہوئے بتایا تھا کہ انہیں کچھ عرصے سے ایک خواب مسلسل آ رہا ہے۔

عالیہ نے بتایا کہ خواب میں کوئی شخص ان کا پیچھا کر رہا ہوتا ہے اور وہ بہت خوف اور پریشانی کا شکار ہوتی ہیں اور پھر وہ اڑ کر اس شخص سے دور چلی جاتی ہیں اور پرسکون ہو جاتی ہیں۔ عالیہ نے صحافی کو بتایا کہ ”جب اس اجنبی شخص کے پیچھا کرنے پر میرا خوف اور پریشانی عروج کو چھونے لگتی ہے تو میں اچانک ہوا میں ایسے تیرنے لگتی ہوں جیسے کوئی بے وزن چیز ہوتی ہے، مجھے ایسے احساس ہوتا ہے جیسے اب کوئی مجھ تک نہیں پہنچ سکے گا، کوئی مجھے چھو بھی نہیں سکے گا، یہ بہت خوشگوار احساس ہوتا ہے۔“عالیہ کے مداحوں کا کہنا ہے کہ درحقیقت یہ خواب عالیہ کی موت کی پیش گوئی تھا۔

واضح رہے کہ عالیہ ایک چھوٹے طیارے میں سوار میامی سے روانہ ہوئی تھیں تاہم ٹیک آف کے چند منٹ بعد ہی طیارے کو حادثہ آ گیا۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ عالیہ کی موت جلنے اور سر میں شدید چوٹ لگنے کی وجہ سے ہوئی۔ ان کی لاش طیارے کے ملبے سے 20فٹ کے فاصلے پر پڑی ملی تھی۔ ان کا جسم اب بھی سیٹ سے بندھا ہوا تھا۔ 

مزید :

تفریح -