روپے کی قدرمیں کمی کی وجہ سے آئی ایم ایف کے قرض میں اضافہ

روپے کی قدرمیں کمی کی وجہ سے آئی ایم ایف کے قرض میں اضافہ
روپے کی قدرمیں کمی کی وجہ سے آئی ایم ایف کے قرض میں اضافہ

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) روپے کی قدر میں کمی کے باعث گزشتہ چار سال میں آئی ایم ایف کا قرض 20 فی صد مہنگا ہوگیا۔ پاکستان، عالمی مالیاتی فنڈ کو دو ارب 28 کروڑ ڈالرواپس کرچکا ہے جبکہ چھ ارب ڈالر اب بھی واجب الادا ہیں۔وزارت خزانہ کے ذرائع کے مطابق گزشتہ چار سال میں روپے کی قدر میں کمی کی وجہ سے آئی ایم ایف سے جو قرض لیا گیا اس کی مالیت میں 20 فی صد اضافہ ہوا،پاکستان آئی ایم ایف کو سالانہ ایک سے اڑھائی فی صد تک سود ادا کر رہا ہے۔ پاکستان نے سال 2008ءمیں غیر ملکی ادائیگیوں کی صورتحال بگڑنے کے بعد آئی ایم ایف سے 7.5 ارب ڈالر سے زائد کا قرضہ لیا تھا۔

مزید :

بزنس -