کراچی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے پیش امام سمیت چار افراد ہلاک

کراچی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے پیش امام سمیت چار افراد ہلاک
کراچی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے پیش امام سمیت چار افراد ہلاک

  

 کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)روشنیوںکے شہر کراچی میں پر تشدد واقعات میں پیش امام سمیت چار افراد جاں بحق ہو گئے ۔ادھر گزشتہ روز فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے سنی تحریک کے کارکن کو سپرد خاک کر دیا گیا۔نیو کراچی میں شرپسندوں نے مسجد میں داخل ہو کر پیش امام احسان اللہ کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا جس کے بعد علاقے میں کشیدگی ہو گئی۔ پولیس نے ایک مبینہ ملزم عبدالشکور کو گرفتار کر لیا جس کا تعلق کالعدم تحریک طالبان سے بتایا گیا ہے۔ دوسری جانب شاہراہ قائدین پر دہشت گردوں نے فائرنگ کر کے شوروم میں بیٹھے تنویر بنگش نامی نوجوان کو قتل کر دیا۔ مشتعل افراد نے ایم اے جناح روڈ اور نمائش چورنگی پر ٹریفک معطل کر دی۔ بوٹ بیسن میں ڈاکوو¿ں نے مزاحمت کرنے پر بینک کے سیکیورٹی گارڈ فیروز کو ہلاک کر دیا۔ منگل کو نیو کراچی میں فائرنگ سے زخمی ہونے والا سیاسی تنظیم کا کارکن فہیم آج ہسپتال میں دم توڑ گیا جبکہ گزشتہ روز سنی تحریک کے جاں بحق ہونے والے کارکن زاہد قادری کی نماز جنازہ پی آئی بی کالونی میں ادا کی گئی۔

مزید :

کراچی -