زرعی یونیورسٹی فیصل آباد نے آئی سی ٹی کے استعمال کاانقلابی قدم اٹھایا

زرعی یونیورسٹی فیصل آباد نے آئی سی ٹی کے استعمال کاانقلابی قدم اٹھایا

لاہور(پ ر)زرعی یونیورسٹی فیصل آباد نے کسانوں کو جدید علوم ان کی دہلیز تک پہنچانے میں ICT کو استعمال میں لا کر ایک انقلابی قدم اٹھایا ہے۔ کھادوں کے ماڈلز کی انفرادیت یہ ہے کہ یہ کاشتکاروں کی خواہش کے مطابق معلومات فراہم کرتے ہیں۔ اس طرح ان ماڈلز کی بدولت ماہرین اور کاشتکار میں دو طرفہ رابطہ ممکن ہو گیا ہے اور یہ قدم یقیناً کسانوں کی پیداوار بڑھانے اور کھادوں پر خرچہ کم کرنے کے لئے ایک سنگِ میل کی حیثیت رکھتا ہے۔ یہ بات صوبائی وزیر زراعت ڈاکٹر فرخ جاوید نے پرنٹ و الیکٹرانک میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ کاشتکار گندم ، کپاس ، کماد ، چاول اور مکئی کی فی ایکڑ بھرپور پیداوار اپنی مرضی کے مطابق حاصل کرنے کے لیے کتنی مقدار میں نائٹروجن اور فاسفورس درکار ہو گی یہ جاننے کے لیے زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کی ویب سائٹ www .fertilizeruaf .pkسے استفادہ حاصل کریں۔ زرعی یونیورسٹی فیصل آباد نے محکمہ زراعت توسیع اور تحقیق کے ساتھ مل کر کھادوں کے ایسے ماڈلز تیار کیے ہیں جن کی مدد سے پنجاب کے کاشتکار اپنی زمین کی ذرخیزی کے مطابق اپنے گھر میں بیٹھے کمپیوٹر یا موبائل فون پر ویب سائٹ کھول کر اپنی مرضی کی پیداوار حاصل کرنے کے لیے نائٹروجن اور فاسفورس کی صحیح اور متناسب مقدار جان سکتے ہیں۔نائٹروجن اور فاسفورس کا استعمال ویب سائٹ پر دیے گئے فرٹیلائزر ماڈلز کے مطابق کرنے سے نہ صرف اُن کے پیداواری اخراجات میں بچت ہو گی بلکہ کھادوں کی مطلوبہ مقدار کے استعمال کے ساتھ فصلوں کی پیداوار میں بھی اضافہ ہوگا ۔ یہ معلومات کاشتکاروں تک پہچانے کیلئے مالی اور تکنیکی تعاو ن یو ایس ایڈ( USAID)اور اکارڈا (ICARDA) فراہم کر رہے ہیں ۔کاشتکاروں کے رقبے اور اُن کے مالی وسائل کے مطابق فصلوں کی آمدن بڑھانے کے منصوبے زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کی ویب سائٹ www.kissandost.pkپر موجود ہیں۔اس ویب سائٹ پر ایسے منصوبے بھی موجود ہیں جن پر عمل کر کے کاشتکار 1 لاکھ روپے فی ایکڑ تک نفع حاصل کر سکتے ہیں۔

لیکن اگر کوئی کاشتکار زیادہ سرمایہ کاری کرنا چاہے تو ایسے منصوبے بھی موجود ہیں جن میں نفع 3سے 4لاکھ روپے فی ایکڑ حاصل کرنا ممکن ہے ۔اس ویب سائٹ پر کاشتکاروں کی سہولت کے لیے آئندہ 5دن تک کی موسمی پیشین گوئی بھی موجود ہے ۔اس ویب سائٹ کے لیے مالی تعاون وزارت برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی کی ملحقہ کمپنی آئی سی ٹی آر اینڈ ڈی فنڈ (ICT R&D Fund) نے فراہم کیا ۔ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر محمد رشید پرنسپل انویسٹی گیٹر زرعی یونیورسٹی، فیصل آباد نے کھادوں کی مقدار معلوم کرنے کیلئے زرعی یونیورسٹی، فیصل آباد کے تیار کردہ فرٹیلائزر ماڈلز اور آمدن بڑھانے کے منصوبوں کے متعلق پرنٹ و الیکٹرانک میڈیا کے نمائندوں کو بریفنگ دیتے ہوئے کیا۔ اس میڈیا بریفنگ میں محمد رفیق اختر ڈائریکٹر زرعی اطلاعات پنجاب کے علاوہ پرنٹ اور الیکٹرانک میڈیا کے نمائندوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔ ڈاکٹر محمد رشید نے مزید بتایا کہ زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کاشتکاروں کو نائٹروجنی اور فاسفورسی کھادوں کی صحیحمقدار فصلوں کی مطلوبہ پیداوار حاصل کرنے بارے ضروری معلومات اور کاشتکاروں کی آمدن بڑھانے کے منصوبوں بارے آگاہی اُن کی دہلیز تک لے کر جا رہی ہے ۔ کاشتکار اپنے گھر بیٹھ کر کمیپوٹر یا موبائل فون کے ذریعے اپنے وسائل اور زرعی رقبوں کی ذرخیزی کو مد نظر رکھتے ہوئے ویب سائٹس وزٹ کر کے بھرپور فائدہ اٹھا سکتے ہیں ۔انہوں نے مزید بتایا کہ اگر کاشتکاروں کو ان ویب سائٹس کے استعمال میں کوئی دشواری پیش آئے تو زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے ٹال فری نمبر 0800-54726پر دفتری اوقات کے دوران مفت کال کر کے رہنمائی حاصل کرسکتے ہیں۔

مزید : کامرس