نیب نے اب تک 681 کرپٹ افراد کو گرفتار کیا ،ڈی جی شہزادسلیم

نیب نے اب تک 681 کرپٹ افراد کو گرفتار کیا ،ڈی جی شہزادسلیم

پشاور(پاکستان نیوز) ڈائریکٹرجنرل قومی احتساب بیورو خیبرپختونخواشہزادسلیم نے کہاہے قومی احتساب بیورو خیبرپختونخواہ نے شروع سے لیکر کہ اب تک681کرپٹ افرادکوگرفتارکیااور 4613ملین روپے کرپٹ لوگوں سے لیکر قومی خزانے میں جمع کروائے ہیں جبکہ پیشہ ورانہ صلاحیتیوں کی بدولت NABخیبرپختونخوانے صرف امسال141کرپٹ افرادکوگرفتارجبکہ خردبردکی گئی2457ملین روپے قومی خزانے میں جمع کروائے گئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ بدعنوانی میں ملوث افرادکوقانون کے کٹہرے میں کھڑاکرنااوران سے لوٹی ہوئی رقم واپس خزانے میں جمع کرنااس بات کی عکاسی کرتاہے کہ قومی احتساب بیورواپنے فرائض منصبی کوبخوبی نبھارہی ہے،ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ نیب ٹھوس ثبوت کے بعدہی کرپٹ افرادکیخلاف قانونی چارہ جوئی عمل میں لاتی ہے۔ان خیالات کااظہارانہوں نے چیک ڈسٹری بیوشن سرمنی کے دوران شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پرمصالحت(پلی بارگین)کے تحت وصول کئے گئے ساڑھے چھ کروڑروپے بھی ایڈیشنل چیف سیکرٹری فنانس ڈیپارٹ خیبرپختونخوارضاء اللہ کے حوالے کیا۔ مصالحت(پلی بارگین) پرتنقیدکے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ پلی بارگین یامصالحت کے تحت نہ صرف کرپٹ افراد سے پیسہ لیکرقومی خزانے میں جمع کردیاجاتاہے بلکہ سزاکے طورپرانکی نوکری بھی ختم کردی جاتی ہے اوروہ دس سال تک انتخابات میں امیدوارکی حیثیت سے حصہ بھی نہیں لے سکتا۔ ڈائریکٹرجنرل قومی احتساب بیوروسلیم شہزادنے کہاکہ ہمارے لئے تمام افرادقابل عزت ہیں کسی کی پگڑی اچھالنامقصدنہیں بلکہ بدعنوانی جیسے ناسورکیخلاف لڑنا ،لوگوں میں بدعنوانی کیخلاف شعوراجاگرکرنااوربدعنوانی کاتدارک کرناہی نیب نصب العین ہے جس پرکسی قسم کاسمجھوتہ نہیں کیاجاسکتا۔

مزید : پشاورصفحہ اول