مظفرآباد، سڑک پر کام کرنیوالے مزدوروں پر ٹھیکیدار کی فائرنگ،3زخمی

مظفرآباد، سڑک پر کام کرنیوالے مزدوروں پر ٹھیکیدار کی فائرنگ،3زخمی

مظفرآباد(بیورورپورٹ)دھنی مائی صاحبہ سڑک پر کام کرنے والے مزدوروں پر ٹھیکیدار کی فائرنگ،بٹگرام خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے تین غیر مقامی مزدور شدید زخمی،سی ایم ایچ مظفرآباد منتقل کردیاگیا۔تھانہ سٹی مظفرآباد کے مطابق ایف آئی آر درج کردی گئی ہے اور ٹھیکیدار سرفراز گیلانی کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جارہے ہیں۔وقوعہ کے مطابق دھنی مائی صاحبہ میں سڑک کی تعمیر کے لیے ٹھیکیدار سرفراز گیلانی نے مزدوروں کو گاڑی میں ڈال کر موقع پر پہنچایا اور انہیں کھدائی ودیگر کاموں پر لگادیا مگر تھوڑی دیر بعد ٹھیکیدار نے گاڑی سے پسٹل نکال کر مزدورں پر فائرنگ کردی جس سے تین مزدور شیر گل ولد خیال محمد،انواراللہ ولد حسن گر اور عزیز الرحمن ولد حاکم علی ساکنان ضلع بٹگرام خیبرپختونخوا زخمی ہوگئے۔وقوعہ کے بعد ٹھیکیدار موقع سے فرار ہوگیا۔مقامی افراد کی اطلاع پر سٹی پولیس نے زخمیوں کو ریسکیو کیا اور سی ایم ایچ مظفرآباد پہنچایا جہاں دو زخمیوں شیر گل اور انواراللہ کی حالت انتہائی نازک ہے جنہیں آئی سی یو وارڈ میں داخل کردیا گیا ہے جبکہ تیسرے زخمی عزیزالرحمن کی حالت خطرے سے باہر بتائی جارہی ہے۔عزیزالرحمن نے ڈیلی خبرنامہ سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ ٹھیکیدار سرفراز گیلانی نے کام کی ہدایت کی مگر تھوڑی دیر کے بعد شدید غصے میں آیا اور گالم گلوچ شروع کردی اور فورا گاڑی سے پسٹل نکال کر اندھا دھند فائرنگ کردی سب مزدورں نے دوڑ کر جانیں بچائیں مگر تین مزدور اس کی گولیوں کی زد میں آگئے ۔مزدورں خدشے کا اظہار کیا کہ ملزم شراب کے نشے میں دھت تھا زخمیوں کو گردن،پیٹ اور ٹانگوں پر گولیاں لگی ہیں۔سٹی پولیس کے مطابق ملزم کی تلاش جاری ہے۔ذرائع کے مطابق ٹھیکیدار سرفراز گیلانی وزیر تعلیم بیرسٹر افتخار گیلانی کا قریبی عزیز ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر