محکمہ لوکل گورنمنٹ و دیہی ترقی مظر آباد کشمیر کونسل فنڈز میں وسیع گھپلوں کا انکشاف

محکمہ لوکل گورنمنٹ و دیہی ترقی مظر آباد کشمیر کونسل فنڈز میں وسیع گھپلوں کا ...

مظفرآباد(رپورٹ:میر بشارت حسین)محکمہ لوکل گورنمنٹ و دیہی ترقی مظفرآباد کشمیر کونسل فنڈز میں وسیع پیمانے پر گھپلے منظر عام پر آگئے ۔کرپشن ثابت ہونے کے باوجود کرپٹ مافیا عہدوں پر بدستور قابض ۔انٹی کرپشن اور احتساب بیورو نے بھی چپ سادھ لی ۔کرپٹ آفیسران اپنے کرتوتوں کی فائلیں غائب کرانے لگے ۔سال 2014کے دوران محکمہ لوکل گورنمنٹ و دیہی ترقی نے کشمیر کونسل سے فنڈز حاصل کیے ۔جو سیاسی مقاصد اور کرپشن کی بھینٹ چڑھا دئیے گئے ۔واٹر ٹینک کرناہ مالیتی 288000چیک نمبر 101411پراجیکٹ لیڈر بنارس اعوان نے حاصل کیے ۔عملاً واٹر ٹینک کا زمین پر کوئی ثبوت موجود نہیں ۔پی سی سی فٹ پاتھ ڈنہ لمیاں پٹیاں مبلغ 288000چیک نمبر 101422محمد تبسم مغل کے نام چیک جاری ہوا ۔فٹ پاتھ تعمیر نہیں ہوا۔پختہ فٹ پاتھ محلہ خوشحال خان ساکنہ شوائی رقمی 288000چیک نمبر 101410منیرخوشحال کے نام سے جاری ہوا فٹ پاتھ تعمیر نہیں کیا گیا ۔تعمیر کنواں لمیاں پٹیاں محلہ یعقوب 192000چیک نمبر 101426محمد یعقوب نے چیک وصول کیا لیکن زمین پر کوئی تعمیر نہیں کی گئی ۔حفاظتی دیوار بسناڑہ لطیف مغل رقمی 960,000زیر چیک نمبر 101393شاہد مجید کے نام جاری ہوا ۔حفاظتی دیوار تعمیر نہ ہو سکی ۔واٹر سپلائی لمیاں پٹیاں 960000محمد یونس زیر چیک نمبر 101412وصول کیا جو ہڑپ ہو گیا ۔تعمیر تکمیل لنک روڈ تھالہ لمیاں پٹیاں 480,000جو کہ شوکت کے نام چیک نمبر 093141جاری ہوا ۔اسی طرح تعمیر بینک روڈ کرناہ 960000محمد جمیل کے نام زیر چیک نمبر 093143جاری ہوا ۔حفاظتی دیوار اپر شوائی مبلغ 960000جو کہ ارشد حسین قریشی کے نام زیر چیک نمبر 093137جاری ہوا۔حفاظتی دیوار ٹھورکرنا مبلغ 480000زیر چیک نمبر 093146امجد حسین کے نام جاری ہوا۔تعمیر حفاظتی دیوار دب مبلغ 480,000صادق حسین کے نام زے رچیک نمبر 093169کے نام جاری ہوا۔تعمیر دیوار بسناڑہ 480000چیک نمبر 093162نام محمد شریف جاری ہوا۔تمعمیر بورنگ واٹر ٹینک تھالہ بسناڑہ مبلغ 480000روپے محمد شوکت علی نے چیک نمبر 093166وصول کیا ۔حفاظتی دیوار تھالہ بسناڑہ 192000عبدالمجید نے چیک نمبر093148وصول کیا تعمیر لنک روڈ لمیاں پٹیاں منصوبہ کا تمام ریکارڈ ہی غائب ہے ۔تعمیر لنک روڈ بسناڑہ 2400000روپے زاہد اقبال نے چیک نمبر 108353وصول کیا ۔حفاظتی دیوار سینٹر پلیٹ خانی زمان 10,0000تعمیر نک روڈ سیری درہ یہ بھی خانی زمان نے مبلغ 750,0000وصول کیے ۔متذکرہ بالا منصوبوں میں بڑے پیمانے پر گھپلے کیے گئے ۔ذمہ داران کا تعین بھی ہوا محکمانہ انکوائری غائب کر دی گئی ۔کرپٹ آفیسران کو کون تحفط فراہم کر رہا ہے ۔عوام حیرت میں مبتلا ہیں ۔وزیر اعظم نے متعدد بار اعلان کیا تھا کہ کرپٹ آفیسران کے خلاف کارروائی ہوگی ۔لیکن اس جانب کوئی پیش رفت نہ ہو سکی ۔عوام نے وزیر اعظم چیف سیکرٹری ،سیکرٹری لوکل گورنمنٹ اور ڈائریکٹر جنرل سے مطالبہ کیا ہے کہ ان منصوبوں کی تحقیقات کیلئے احتساب بیورو کو ریفرنس بھیجا جائے ۔بصورت دیگر عدلیہ کے دروازے پر دستک دینے کے ساتھ احتجاجی تحریک شروع کی جائے گی ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر