شدید سردی، وادی نیلم میں مختلف بیماریاں پھوٹ پڑیں،عبدالرشیدڈار

شدید سردی، وادی نیلم میں مختلف بیماریاں پھوٹ پڑیں،عبدالرشیدڈار

مظفرآباد(بیورورپورٹ)شدید سردی کے باعث وادی نیلم میں مختلف بیماریاں پھوٹ پڑیں،وادی کے اسپتالوں میں ادویات کی شدید قلت ،آبادی کے تناسب سے ادویات کاکوٹہ بڑھانے کامطالبہ ، وزیراعظم راجہ فاروق حیدر خان، سپیکراسمبلی شاہ غلام قادر وادی نیلم کے تمام طبی مراکز میں ادویات فراہمی یقینی بنانے کیلئے محکمہ صحت کو ہدایت کریں،اسپتالوں میں ادویات کے علاوہ دیگر سہولیات کافقدان ہے ، ایمبولینس کی فراہمی اور مرمتی وقت کاتقاضاہے ، غریب عوام کٹھارہ جیپوں میں مریضوں کولیجاکر رلنے لگے ، ڈی ایچ او نیلم اسپتالوں میں بہتری لانے میں ناکام ہوچکے ہیں۔سپیکر اسمبلی خصوصی اقدامات اٹھائیں، ڈرگ انسپکٹر وادی نیلم میں میڈیکل سٹور وں پر ادویات کامعیار چیک کریں ۔ان خیالات کااظہار وائس چیئرمین عوامی رابطہ بورڈ مسلم لیگ ن مظفرآباد ڈویژن عبدالرشید ڈار نے گزشتہ روز میڈیا کے نمائندگان سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہاکہ وادی نیلم کٹھن ترین ضلع ہے جہاں کے عوام موسمی بیماریوں سے اکثردوچار ہوتے ہیں۔شدید سردی کے باعث مریضوں کودور درراز منتقل کرنا بھی مشکل کام ہے ۔ تمام بی ایچ یو ، فرسٹ ایڈپوسٹوں پر اضافہ اور موجودہ آبادی کے تناسب سے ادویات کی فراہمی یقینی بنائی جائے تاکہ غریب عوام بیماریوں سے بچ سکے انہوں نے بتایا کہ ڈی ایچ او نیلم ڈاکٹر غلام نبی کو محکمہ صحت کیساتھ کوئی سروکار نہیں ، ان کی دلچسپی صرف مراعات تک محدود ہے ۔ وادی بھر کے اسپتال ادویات سے خالی ہیں۔ غریب عوام بدستور میڈیکل سٹوروں پر جعلی اور غیر معیاری ادویات لیکر لوٹے جارہے ہیں۔ انہوں نے سپیکر اسمبلی سے مطالبہ کیاہے کہ سردیوں کے موسم میں خصوصی طور پر علاقہ کے عوام کیلئے ادویاتی کوٹہ بڑھایاجائے تاکہ وادی میں پائی جانیوالی تشویش کاخاتمہ ہوسکے ۔ عبدالرشید ڈار کاکہنا تھا کہ بی ایچ یو دودھنیال سمیت فرسٹ ایڈ پوسٹ تہجیاں، دوسٹ ، سرگن، سمیت پھولاوی کے تمام مراکز صحت ادویات سے خالی ہیں۔ حکومت ہنگامی بنیادوں پر ان مراکز صحت میں ادو یات مہیا کرے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر