چکوال، حلقہ پی پی20کے ضمنی الیکشن میں تیزی آنا شروع ہوگئی

چکوال، حلقہ پی پی20کے ضمنی الیکشن میں تیزی آنا شروع ہوگئی

چکوال(ڈسٹرکٹ رپورٹر) حلقہ پی پی20کے ضمنی الیکشن میں تیزی آنا شروع ہوگئی ہے۔ کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال اور اپیلوں کا مرحلہ بھی مکمل ہونے والا ہے۔ دس دسمبر کو کاغذا ت نامزدگی واپس لینے کی آخری تاریخ ہے اور گیارہ دسمبرکو حتمی امیدواروں کی انتخابی فہرست بمعہ انتخابی نشانات جاری کی جائے گی۔ مقابلہ پاکستان مسلم لیگ ن کے چوہدری حیدر سلطان اور پاکستان تحریک انصاف کے طارق افضل کالس کے درمیان ہی ہے۔ پیپلز پارٹی نے ایک نو آموز شخص جس کی حلقے میں کوئی قابل ذکر شناخت نہیں تیمور نواب کی شکل میں میدان میں اتارا ہے جبکہ ابتدائی اطلاعات کے مطابق پی ٹی آئی کے کچھ مقامی امیدوار پی ٹی آئی کے نامزد رہنما طارق افضل کالس کی گاڑی میں بھی دیکھے جا رہے ہیں۔ طارق افضل کالس کی سرداران چکوال کیساتھ قریبی رشتہ داری ہے جس کی وجہ سے ان کو کافی ایڈوانٹج مل رہا ہے۔ مسلم لیگ ن کی پوزیشن پچھلے چند ماہ سے یقینی طو رپر متاثر ہوئی ہے۔ میاں محمد نواز شریف کی نااہلی اور اس کے بعد تیزی سے بدلتی ہوئی صورتحال ، فیض آباد کا دھرنا یقینی طو رپر مسلم لیگ ن کے ووٹ بینک پر اثر انداز ہوئے ہیں۔ طارق افضل کالس ابھی تک جماعت اسلامی اور مسلم لیگ ق کے علاوہ پاکستان عوامی تحریک کی حمایت توحاصل کر چکے ہیں مگر یہ تینوں جماعتیں طارق افضل کالس کی حمایت میں ابھی تک متحرک نہیں ہوئی ہیں۔ تحریک لبیک یا رسول اللہ کے امیدوار ناصر منہاس ایڈووکیٹ کے بارے میں سیاسی حلقے پرامید ہیں کہ وہ کافی ووٹ لیں گے مگر ابھی تک وہ حلقے میں کوئی خاص طور پرمتحرک نہیں ہوئے ہیں، دو تین اور بھی امیدوار میدان میں موجود ہیں مگر وہ بمشکل ہی چار کا ہندسہ عبور کر سکیں گے۔ چوہدری حید ر سلطان بے شک فیورٹ دیکھائی دیتے ہیں مگر پاکستان تحریک انصاف کی مقامی قیادت اور خصوصی طور پر راجہ یاسر سرفراز ایک بڑے اپ سیٹ کیلئے پرامید ہیں ، بہرحال آنے والے دنوں میں صورتحال مزید واضح ہوکر سامنے آئے گی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر